Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

الطاف حسین نے کارکنان کے اصرار پر قیادت سے دستبرداری کا فیصلہ واپس لے لیا


الطاف حسین نے کارکنان کے اصرار پر قیادت سے دستبرداری کا فیصلہ واپس لے لیا
 Posted on: 9/14/2014
الطاف حسین نے کارکنان کے اصرار پر قیادت سے دستبرداری کا فیصلہ واپس لے لیا
الطاف حسین نے ذمہ داران کی فرائض سے مسلسل غفلت کے باعث ایم کیوایم کی قیادت سے دستبرداری کا اعلان کیا تھا
اگر آپ میری قیادت میں کام کرنا چاہتے ہیں تو پھر 1978ء کے سینئر کارکنان کو سامنے آنا ہوگااورمیرٹ کی بنیاد پر ہر سیکٹر سے کم ازکم تین ساتھیوں کے نام دینے ہونگے، الطاف حسین
ایسے ساتھیوں کے انٹرویوز کرکے انہیں رابطہ کمیٹی میں شامل کیاجائے گا، الطاف حسین
جب صاف ستھرے، محنتی ، بہادر اور ایماندار ارکان کی تعداد زیادہ ہوجائے گی تو پھر فرائض سے غفلت برتنے والے اراکین رابطہ کمیٹی کو ان کے علاقوں میں واپس بھیج دیا جائے گا، الطاف حسین
ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب نائن زیرو کراچی میں کارکنان کے اجلاس سے ٹیلی فونک خطاب
لندن۔۔۔14، ستمبر2014ء
متحدہ قومی موومنٹ کے قائد جناب الطاف حسین نے کارکنان کے بے حداصرار پر ایم کیوایم کی قیادت سے دستبرداری کا فیصلہ واپس لے لیا۔قبل ازیں جناب الطاف حسین نے رابطہ کمیٹی سمیت تحریک کے دیگر ذمہ داران کے غیرتنظیمی طرزعمل اور فرائض سے مسلسل غفلت کے باعث ایم کیوایم کی قیادت سے دستبرداری کا اعلان کیا تھاجس پر رات گئے نائن زیروعزیزآباد میں کارکنان بہت بڑی تعدادمیں جمع ہوگئے ،یہ کارکنان جناب الطاف حسین کے حق میں مسلسل فلک شگاف نعرے لگاتے رہے اور جناب الطاف حسین سے فیصلہ واپس لینے کا اصرار کرتے رہے، اس موقع پر انتہائی رقت انگیز مناظر دیکھنے میں آئے اوربیشتر کارکنان زاروقطار روتے ہوئے جناب الطاف حسین سے والہانہ عقیدت ومحبت کا اظہار کرتے رہے۔ ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب کراچی اورحیدرآباد میں کارکنان کے اجتماعات سے ٹیلی فون پر خطاب کرتے ہوئے جناب الطاف حسین نے کارکنان کے بے حداصرار پر قیادت سے دستبرداری کا فیصلہ واپس لیتے ہوئے کہاکہ اگر آپ میری قیادت میں کام کرنا چاہتے ہیں تو پھرمیں موجودہ رابطہ کمیٹی کو آخری چانس دیتا ہوں لیکن اب 1978ء کے سینئر کارکنان کو سامنے آنا ہوگااورمیرٹ کی بنیاد پر ہر سیکٹر سے کم ازکم تین ساتھیوں کے نام دینے ہونگے جو تعلیم یافتہ ، باصلاحیت، ایماندار ہوں اورکسی بھی قسم کی معاشرتی برائیوں میں ملوث نہ ہوں ۔ ایسے ساتھیوں کے انٹرویوز کرکے انہیں رابطہ کمیٹی میں شامل کیاجائے گاجب صاف ستھرے، محنتی ، بہادر اور ایماندار ارکان کی تعداد زیادہ ہوجائے گی تو پھر فرائض سے غفلت برتنے والے اراکین رابطہ کمیٹی کو ان کے علاقوں میں واپس بھیج دیا جائے گا۔جناب الطاف حسین نے کہاکہ اب تحریک کے سینئر اور مخلص کارکنان کی ذمہ داری ہے کہ وہ مجھے یقین دلائیں کہ جو بھی رابطہ کمیٹی تشکیل پائے وہ میرٹ کی بنیاد پر بنائی جائے اور اگر وہ مجھے سکھ نہیں دے سکتی توکم از کم مجھے دکھ بھی نہ پہنچائے ۔جناب الطاف حسین نے کہاکہ ٹھیک ہے آج میں آخری مرتبہ آپ کی بات مان کر قیادت سے دٍستبرداری کا فیصلہ واپس لیتا ہوں۔ جس پر اجتماعات میں شریک کارکنان نے فلک شگاف نعرے لگائے جس کا سلسلہ کافی دیر تک جاری رہا۔


12/9/2016 9:19:35 AM