Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

ملک کی تازہ ترین بدلتی ہوئی اور بگاڑ کی طر ف جانے وا لی سیاسی صورتحال پرایم کیوایم کےقائدالطاف حسین کااظہار تشویش


ملک کی تازہ ترین بدلتی ہوئی اور بگاڑ کی طر ف جانے وا لی سیاسی صورتحال پرایم کیوایم کےقائدالطاف حسین کااظہار تشویش
 Posted on: 8/21/2014
ملک کی تازہ ترین بدلتی ہوئی اور بگاڑ کی طر ف جانے وا لی سیاسی صورتحال پرایم کیوایم کےقائدالطاف حسین کااظہار تشویش 
تحریک انصاف،پاکستان عوامی تحریک اورانکی حلیف جماعتوں کے سربراہان اور رفقائے کار صبر سےکام لیں ۔ حکومت ودیگر ارباب اختیاربھی تحمل کا مظاہرہ کریں۔الطا ف حسین 
حکومت دھرنے دینے والوں کے خلاف دھمکی آمیز رویہ اختیار کرنے یا طاقت کا استعمال کرنے سے ہرممکنہ طور پر گریز کرے۔الطاف حسین کی دردمندانہ اپیل
معاملات کوافہام وتفہیم سے حل کرنے کیلئے مذاکرات کاعمل کوئی وقت ضائع کیے بغیرفی الفور دوبارہ شروع کیاجائے
’’کچھ دو اور کچھ لو ‘‘کی پالیسی پر عمل کرتے ہوئے ایسے حل کی طرف جائیں جہاں کسی کی بھی عزت نفس مجروح نہ ہو
بہتر ہے کہ آپس میں ہی بات چیت کے ذریعہ جلد ازجل کوئی قابل قبول حل تلاش کرلیں ورنہ کہیں ایسا نہ ہوکہریاست، ملک کی سلامتی وبقاء کیلئے مداخلت کرنے پر مجبورہو
دھرنے دینے والے اپنے احتجاج کو پرامن رکھیں ، تندوتیز اور تضحیک آمیز الفاظ یا جملے استعمال کرنےسے گریز کریں اوراپنی تقاریرمیں شائستگی اختیار کریں
ملک صرف حکمرانوں یاحکمراں جماعت کاہی نہیں بلکہ اپوزیشن جماعتوں،دھرنے دینے والوں اور دھرنے کی مخالفت کرنیوالوں،سبھی کا ہے۔الطاف حسین
لندن۔۔۔21 اگست 2014ء
متحدہ قومی موومنٹ کے قائدجناب الطاف حسین نے آج کی تازہ ترین بدلتی ہوئی اور بگاڑ کی طر ف جانے وا لی سیاسی صورتحال پر انتہائی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے حکومت ، تحریک انصاف،پاکستان عوامی تحریک اوران کی حلیف جماعتوں کے سربراہان اور رفقائے کار سے ایک مرتبہ پھر پرزوراپیل کی ہے کہ وہ صبر سے کام لیں اور حکومت ودیگر ارباب اختیاربھی تحمل کا مظاہرہ کریں ۔اپنے بیان میں جناب الطاف حسین نے تحریک انصاف، پاکستان عوامی تحریک اور ان کی حلیف جماعتوں کے سربراہان اوردیگر رہنماؤں سے بھی پرزوراپیل کی کہ وہ اپنے احتجاج کو پرامن رکھیں ، تندوتیز اور تضحیک آمیز الفاظ یا جملے استعمال کرنے سے گریز کریں اوراپنی تقاریرمیں شائستگی اختیار کریں۔انہوں نے کہاکہ جمہوریت میں اختلاف رائے کا حق سب کو حاصل ہوتا ہے لیکن اختلاف کو دشمنی میں ہرگز تبدیل نہیں کرنا چاہیے اور یہ ہمیشہ خیال رکھنا چاہیے کہ ملک صرف حکمرانوں یاحکمراں جماعت کاہی نہیں بلکہ ان کے ساتھ ساتھ اپوزیشن جماعتوں،دھرنے دینے والوں اوردھرنے کی مخالفت کرنیوالوں،سبھی کا ہے اور ملک کی سلامتی وبقاء اوراستحکام کی ذمہ داری بھی سب پر عائد ہوتی ہے ۔ جناب الطاف حسین نے حکومت سے دردمندانہ اپیل کی کہ آپ بھی دھرنے دینے والوں کے خلاف دھمکی آمیز رویہاختیار کرنے یا طاقت کا استعمال کرنے سے ہرممکنہ طور پر گریز کریں اور معاملات کوافہام وتفہیم سے حل کرنے کیلئے مذاکرات کاجوعمل شروع کیا تھا کوئی وقت ضائع کیے بغیر اس کافی الفور دوبارہ آغاز کیاجائے اور’’کچھ دو اور کچھ لو ‘‘کی پالیسی پر عمل کرتے ہوئے ایسے حل کی طرف جائیں جہاں کسی کی بھی عزت نفس مجروح نہ ہو۔ جناب الطاف حسین نے کہاکہ ملک کی اس صورتحال کا تمام مکاتب فکر کے لوگ بشمول ریاستی ادارے ،سب ہی بہت قریبی نگاہ سے جائزہ لے رہے ہیں لہٰذا میں حکومت او ردھرنے دینے والوں سے یہ بھی کہنا چاہتا ہوں کہ بہتر ہے کہ وہ آپس میں ہی بات چیت کے ذریعہ جلد ازجل کوئی قابل قبول حل تلاش کرلیں ورنہ پھر کہیں ایسا نہ ہوکہ ریاست، ملک کی سلامتی وبقاء کیلئے مداخلت کرنے پر مجبورہو ۔ 


12/11/2016 2:01:41 AM