Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

ایک عام پاکستانی کو دی جانے والی سہولت سے بھی جناب الطاف حسین کو محروم رکھنے کی کوشش کی جارہی ہے، حیدر عباس رضوی


ایک عام پاکستانی کو دی جانے والی سہولت سے بھی جناب الطاف حسین کو محروم رکھنے کی کوشش کی جارہی ہے، حیدر عباس رضوی
 Posted on: 5/13/2014
ایک عام پاکستانی کو دی جانے والی سہولت سے بھی جناب الطاف حسین کو محروم رکھنے کی کوشش کی جارہی ہے، حیدر عباس رضوی 
پانچ ہفتے گزرنے کے بعد بھی جناب الطاف حسین کو نیکوپ جاری نہیں کیا گیا اور اس صورتحال میں عجیب و غریب دلائل سامنے لائے جارہے ہیں 
جناب الطاف حسین کو پاکستانی دستاویزات نہ جاری کرکے کسی کی جھوٹی انا کی تسکین ہورہی ہے یا کوئی انہیں پاکستانی ماننے کو تیار نہیں ہے
جناب الطاف حسین کو سہولت دینے ، فنگر پرنٹس اور تصویر لینے کیلئے گئے نادرا عملے کے خلاف انتقامی کارروائی کیوں کی گئی ؟
جناب الطاف حسین کو فی الفور ان کے بنیادی حقوق فراہم کئے جائیں، وزیراعظم ، صدر ، وزیر داخلہ سے مطالبہ 
ایک ایک کارکن نادرا ، وفاقی وزیر داخلہ اور حکومت وقت سے یہ وضاحت چاہتا ہے کہ جناب الطاف حسین 
کو نیکوپ کارڈ جاری نہ کرنے کی وجہ کیا ہے 
ہم اس بات کو تسلیم ہی نہیں کرتے کہ نادرا سے پروسیس ڈیٹا ڈیلیٹ ہوجاتا ہے
درخواست موصول نہیں ہوئی تو پھروہ وضاحت کی جائے کہ ٹوکن نمبر ، رسید کیسے جاری کی گئی ،ٹریکنگ نمبر کیسے دیا گیا 
خورشید بیگم سیکریٹریٹ عزیز آباد میں رابطہ کمیٹی کے دیگر اراکین کے ہمراہ پرہجوم پریس کانفرنس سے خطاب 
کراچی ۔۔۔13، مئی 2014ء 
متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے کہا ہے کہ بانی و قائد تحریک جناب الطاف حسین کونیکوپ کارڈاور پاکستانی پاسپورٹ جاری نہ کرناایم کیوایم کے7سینیٹر ز، 25ایم این ایز ، 52ایم پی ایزاور کروڑوں چاہنے والے عوام کا استحقا ق مجروح کرنے کے مترادف ہے اور یہ عمل پاکستان کے آئین کے بھی سراسر خلاف ہے ، آئین پاکستان ہر پاکستانی کو یہ یقین دلاتاہے کہ بغیر کسی امتیازی سلوک کے پاکستان کے تمام شہریوں کے مساویانہ حقوق ہیں اور پاکستان کا قومی شناختی حاصل کرنا ہر پاکستانی کا بنیادی حق ہے ۔ رابطہ کمیٹی نے کہاکہ افسوس کی با ت ہے کہ حکومت ،نادرا کے ذریعے اور نجانے کون سے عناصر اپنی جھوٹی انا کی تسکین کیلئے تمام قانونی تقاضے پورا کرنے کے بعد بھی جناب الطاف حسین کا نیکوپ کارڈ جاری نہیں کررہے ہیں،جناب الطاف حسین کے کروڑوں چاہنے والے ملک اوراس سے باہر موجود ہیں ،وہ انتہائی اہم جماعت ایم کیوایم کے قائدہیں ، اگر ان کے ساتھ یہ طریقہ روارکھاجارہا ہے تو ایک عام پاکستانی کے ساتھ جس کا کوئی پرسان حال نہیں ان کے ساتھ کیا سلوک کیاجاتا ہو گا ۔ان خیالات کااظہار منگل کی شام خورشید بیگم سیکریٹریٹ عزیز آباد میں ایم کیوایم کی رابطہ کمیٹی کے رکن حید عباس رضوی نے رابطہ کمیٹی کے دیگر اراکین واسع جلیل ، وسیم اختر ، سیف یار خان ، گلفراز خان خٹک ، اسلم آفریدی اور اشفاق منگی کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ حیدر عباس رضوی نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ 4، اپریل 2014ء کو جناب الطاف حسین نے تمام قانونی تقاضوں کو پورا کرتے ہوئے اپنے نیکوپ یعنی نیشنل اڈینٹیٹی کارڈ اوورسیز پاکستانی کیلئے اپلائی کیا اور اسی کے ساتھ ساتھ دیگر سفری دستاویزات کیلئے کوشش کی اور باقاعدہ درخواست دی ۔ انہو ں نے درخواست کی رسید کی کاپی صحافیوں کو دکھاتے ہوئے کہاکہ اس رسید میں تمام قانونی تقاضوں اور ضروریات کو جناب الطاف حسین نے پورا کیا اور یہ تقاضے پورا کرنے ، بائیو ڈیٹا ، ان کی تصاویر ،فنگر پرنٹس نادرا کے عملے نے حاصل کئے اور تمام ترقانونی ضروریات پوری ہونے کے بعد جناب الطاف حسین کو نیکوپ کی یہ رسید جاری کی جس کی ٹریکنگ آئی ڈی503601007637ہے ۔ لندن کے وقت کے مطابق 6:55 منٹ اور 18سیکنڈ کو یہ رسید جاری کی گئی اورساتھ ساتھ یہ ٹوکن نمبر2 جناب الطاف حسین کو جاری کیا گیا اس کی جو فیس سرکاری طور پر جناب الطاف حسین سے وصول کی گئی وہ 64پاؤنڈ ہے ۔ انہوں نے کہاکہ جناب الطاف حسین کی اس درخواست کے بعد 17اپریل کو دفتر خارجہ کی ترجمان تسنیم اختر نے اپنی پریس بریفنگ میں کہا کہ جناب الطاف حسین کی درخواست موصول ہوگئی ہے اور اسے وزارت داخلہ بھیج دیا گیا ہے یہ بات ریکارڈ پر ہے۔ انہوں نے کہاکہ ایک عام پاکستانی کو یہ اختیار حاصل ہے کہ وہ نیکوپ کارڈ اور دیگر سفری دستاویزات کے حصول کیلئے باقاعدہ درخواست دے ، قانونی تقاضے پورا کرے تو اس کو کم از کم ایک ہفتے میں مطلوبہ ڈاکومنٹ دیدیا جاتا ہے مگر یہاں پانچ ہفتے گزرنے کے بعد بھی جناب الطاف حسین کو نیکوپ جاری نہیں کیا گیا اور اس صورتحال میں عجیب و غریب دلائل سامنے لائے جارہے ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ آج ایم کیوایم کا ایک ایک کارکن نادرا ، وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان اور حکومت وقت سے یہ وضاحت چاہتا ہے کہ آخر کیا وجہ ہے کہ جناب الطاف حسین کو نیکوپ کارڈ جاری نہیں کیاجارہا ہے ؟ کیا اس میں کسی کی جھوٹی انا کی تسکین ہورہی ہے یا کوئی انہیں پاکستانی ماننے کو تیار نہیں ہے اگرقائد تحریک جناب الطاف حسین پاکستانی نہیں ہیں تو پھر بتایاجائے کہ اس ملک میں پاکستانی ہے کون ؟کس کو یہ استحقاق حاصل ہے کہ وہ اپنے آپ کو پاکستانی کہہ سکے کارکنان و عوام کا یہ سوال ہے کہ اگر قائد تحریک پاکستانی نہیں تو ہم میں سے کون پاکستانی ہوگا ؟۔جناب الطاف حسین ہمارے دلوں کی دھڑکن ہیں ، سینے میں دل بنکر دھڑکتے ہیں ، وہ کسی بھی پاکستانی کی طرح ہر ایک کیلئے معزز و محترم ہیں ، ۔ انہوں نے صدر مملکت ممنون حسین ،وزیراعظم نواز شریف ،، وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان، نادرا اور پاسپورٹ کے ڈی جی سے مطالبہ کیا کہ جناب الطاف حسین کو فی الفور ان کے بنیادی حقوق فراہم کئے جائیں ۔انہوں نے ایڈیشنل سیکریٹری داخلہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ انتہائی افسوس کا مقام ہے کہ یہ اوچھے ہتھکنڈے استعمال کئے جارہے ہیں آج ولی الرحمن جو وزیر مملکت برائے داخلہ ہیں انہوں نے کہا کہ ایک مہینے میں تو ڈیٹا سے ریکارڈ اڑ جاتا ہیہم اس بات کو تسلیم ہی نہیں کرتے کہ نادرا سے پروسیس ڈیٹا ڈیلیٹ ہوجاتا ہے اور ایک مہینے تو کیا یہ ریکارڈ تو ہمیشہ ہمیشہ کیلئے رہتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ وہ لوگ جو نعرے لگاتے تھے کہ قائد تحریک جناب الطاف حسین کب پاکستان آئیں گے اور یہ سنتے سنتے ہمارے کان پک گئے تھے آج جب سفری دستاویزات طلب کیں تو بہت سو کے طوطے اڑ گئے اور پیسنے چھوٹ گئے ۔ انہوں نے کہاکہ وہ لوگ جوجناب الطاف حسین کو سفری دستاویزات فراہم نہیں کررہے وہ تحفظ کیا فراہم کریں گے ؟ ، انہوں نے کہا کہ نادرا موبائل رجسٹریشن کا وہ عملہ جس نے قائد تحریک جناب الطاف حسین کو عام پاکستانی تصور کرتے ہوئے انہیں سہولت دی ، انہیں معطل کرنااور ان کا پاکستان طلب کیا جاتا انتہائی قابل مذمت ہے ، ۔ انہوں نے کہاکہ نادرا کے ملازمین نے تو محض ایک پاکستانی کو سہولت دی تھی جو ان کے فرائض منصبی میں شامل تھا ان کو اسی کی تنخواہ ملتی ہے اس بات کی اگر کوئی سزا دینی ہے تو ہمیں دیجئے ان غریب ملازمین کا کوئی قصور نہیں ہے ، ان کو ان کے عہدوں پر باعزت طور پر بحال کیاجائے ۔ انہوں نے قائدحزب اختلاف خورشید شاہ ،پختونخواہ عوامی ملی پارٹی کے سربراہ محمود خان اچکزئی ، دیرینہ دوست اور مہربان جاوید ہاشمی ، شاہ محمودقریشی ، شاہی سید کی جانب سے جناب الطاف حسین کے بنیادی حق کے حصول کیلئے آواز بلند کرنے پر دلی تشکر کااظہار کیا ۔ انہوں نے کہا کہ ہم اپنا آئینی و قانونی حق محفوظ رکھتے ہیں ہم نہ صرف پاکستان بلکہ دنیا بھر میں اس سنگین انسانی حقوق کی خلاف ورزی کے خلاف صدائے احتجاج بلند کریں گے اور عدالتوں کارخ کریں گے اور ہرسطح پر احتجاج ریکارڈ کرائیں گے ورنہ پھر ہمیں بتایاجائے کہ رسید جاری کرنے کے باوجود ، ڈیٹا حاصل کرنے ، فنگر پرنٹس حاصل کرنے ، کمپیوٹرائزڈ تصویر لینے کے باوجود جناب الطاف حسین کو جو کہ کروڑوں دلوں کی دھڑکن ہے اس ملک اور دنیا بھر میں ان کے لاکھوں چاہنے والے موجود ہیں انہیں بنیادی حق پاکستانی ہونے سے کیوں محروم کیاجارہاہے ؟ 

12/8/2016 9:49:35 PM