Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

ایم کیوایم کے کارکن سلامت علی شہید کے قتل میں ملوث گینگ وار کے دہشت گردوں کو فی الفور گرفتار کیا جائے۔ رابطہ کمیٹی


ایم کیوایم کے کارکن سلامت علی شہید کے قتل میں ملوث گینگ وار کے دہشت گردوں کو فی الفور گرفتار کیا جائے۔ رابطہ کمیٹی
 Posted on: 2/14/2014
ایم کیوایم کے کارکن سلامت علی شہید کے قتل میں ملوث گینگ وار کے دہشت گردوں کو فی الفور گرفتار کیا جائے۔ رابطہ کمیٹی
سلامت علی شہید کے قاتلوں کو 72 گھنٹوں میں گرفتار نہیں کیا گیا تو ایم کیوایم آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کرے گی
گینگ وار کے دہشت گردوں کو ایم کیوایم کے کارکنوں، ہمدردوں اور دیگر معصوم شہریوں کے قتل کا لائسنس دیدیا گیا ہے
گینگ وار کے دہشت گردوں کو حکومت سندھ کے بعض عناصر کی مکمل حمایت اور سرپرستی حاصل ہے
کراچی میں جاری ٹارگٹڈ آپریشن قیام امن کیلئے نہیں بلکہ ایم کیوایم کو کچلنے کیلئے کیا جارہا ہے
کراچی ۔۔۔14 فروری 2014ء
متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے پی آئی بی کالونی کے علاقے میں لیاری گینگ وارکے مسلح دہشت گردوں کی فائرنگ سے ایم کیوایم کے سینئر کارکن اورسابق جوائنٹ یونٹ انچارج سلامت علی کی شہادت کے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ سلامت علی شہید کے قاتلوں کو72 گھنٹوں میں گرفتارنہیں کیا گیا تو ایم کیوایم اپنے آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کرے گی۔ اپنے بیان میں رابطہ کمیٹی نے کہا کہ کراچی میں ٹارگٹڈ آپریشن کے نام پرپولیس، رینجرز اور دیگر قانون نافذ کرنے والے ادارے ایم کیوایم کے معصوم وبے گناہ کارکنوں کو گرفتار کررہے ہیں، انہیں سرکاری حراست میں وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنایا جارہا ہے، ماورائے عدالت قتل کیا جارہا ہے جبکہ دوسری جانب لیاری گینگ وار کے دہشت گردوں کوایم کیوایم کے کارکنوں ،ہمدردوں اوردیگرمعصوم شہریوں کے قتل کا کھلا لائسنس دیدیا گیا ہے۔ رابطہ کمیٹی نے کہا کہ گینگ وار کے مسلح دہشت گردوں نے لیاری اوراس کے اطراف کے علاقوں میں قتل وغارتگری اوردہشت گردی کابازارگرم کرکھاہے،یہ دہشت گرد مخالفین پر راکٹوں اوربموں سے حملے کررہے ہیں۔ آج ان دہشت گردوں نے پی آئی بی میں ایم کیوایم کے کارکن سلامت علی کو بیدردی سے گولیاں مار کر شہید کردیا۔ رابطہ کمیٹی نے کہاکہ اس سے قبل بھی پی آئی بی کے علاقے میں پیپلز امن کمیٹی کے دہشت گرد ایم کیوایم کے کئی کارکنوں اور ہمدردوں کو شہید کرچکے ہیں لیکن آج تک کسی ایک شہید کارکن کے قاتل کو گرفتار نہیں کیا گیا اس سے صاف ظاہر ہے کہ ان عناصر کو حکومت سندھ کے بعض عناصرکی مکمل حمایت اورسرپرستی حاصل ہے۔رابطہ کمیٹی نے کہا کہ پیپلزامن کمیٹی کے دہشت گرد ایم کیوایم کے بے گناہ کارکنوں اور ہمدردوں کوجس طرح دہشت گردی کا نشانہ بنارہے ہیں اورشہرکے امن کو تباہ کررہے ہیں اس سے صاف ظاہر ہے کہ کراچی میں جاری ٹارگٹڈ آپریشن قیام امن کیلئے نہیں بلکہ ایم کیوایم کو کچلنے کیلئے کیا جارہا ہے۔ رابطہ کمیٹی نے صدر ممنون حسین، وزیراعظم نوازشریف، وفاقی وزیرداخلہ چوہدری نثارعلی، گورنر سندھ ڈاکٹرعشرت العباد اور وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ سے مطالبہ کیا کہ ایم کیوایم کے کارکن سلامت علی شہید کے قتل میں ملوث گینگ وارکے دہشت گردوں کو فی الفور گرفتارکیاجائے اورانہیں قانون کے مطابق سزادی جائے۔ 

12/7/2016 2:16:17 PM