Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

معروف فلاسفر پروفیسر ڈاکٹر حسن ظفرعارف کا سفاکانہ قتل قابل مذمت ہے ، کینیڈین رکن پارلیمنٹTom Kmiec


معروف فلاسفر پروفیسر ڈاکٹر حسن ظفرعارف کا سفاکانہ قتل قابل مذمت ہے ، کینیڈین رکن پارلیمنٹTom Kmiec
 Posted on: 1/31/2018
معروف فلاسفر پروفیسر ڈاکٹر حسن ظفرعارف کا سفاکانہ قتل قابل مذمت ہے ، کینیڈین رکن پارلیمنٹTom Kmiec 
ڈاکٹر حسن ظفر،پاکستان کے سیاسی اورمعاشی نظام پر تنقید کرتے تھے اور متحدہ قومی موومنٹ سے وابستگی رکھتے تھے، Tom Kmiec 
پاکستان میں بلوچوں ، مہاجروں اورغیرمسلموں کے انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں بڑھتی جارہی ہیں ،Tom Kmiec 
بڑھتے ہوئے پرتشدد حملوں میں مہاجروں کو باقاعدہ نشانہ بنایاجارہا ہے ، Tom Kmiec

کینیڈا کے رکن پارلیمنٹ Tom Kmiec نے پاکستان میں قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے معروف فلاسفر پروفیسر ڈاکٹر حسن ظفرعارف کے اغواء،ان پر بہیمانہ تشدد اور سفاکانہ قتل کی مذمت کی ہے ۔ کینیڈین پارلیمنٹ میں تقریر کرتے ہوئے Tom Kmiec نے ایوان کی توجہ پاکستان میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں پر مبذول کراتے ہوئے کہاکہ پاکستان میں غیرمسلموں ، بلوچوں اور مہاجروں کے انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں بڑھتی جارہی ہیں ۔ بلوچ ہیومن رائٹس آرگنائزیشن کی رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہاکہ گزشتہ سال صرف اگست کے مہینے میں 91 افراد کو ماورائے عدالت قتل کیاگیاجبکہ 138 افراد لاپتہ کیے جاچکے ہیں ۔ انہوں نے مزید کہاکہ کرسمس سے قبل بلوچستان کے دارالحکومت میں مسیحی کمیونٹی کے 9 افراد دہشت گرد حملے میں اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں ۔ 
رکن پارلیمنٹ Tom Kmiec نے پاکستان میں مہاجروں پر ڈھائے جانے والے مظالم کا تذکرہ کرتے ہوئے کہاکہ بڑھتے ہوئے پرتشدد حملوں میں مہاجروں کو باقاعدہ نشانہ بنایاجارہا ہے ، جنوری 2018ء میں فلسفہ کے پروفیسر ڈاکٹر حسن ظفرعارف کو قانون نافذ کرنے والے اداروں نے اغواء کرکے بہیمانہ تشدد کا نشانہ بناکر قتل کردیا کیونکہ وہ پاکستان کے سیاسی اورمعاشی نظام پر تنقید کرتے تھے اور متحدہ قومی موومنٹ سے وابستگی رکھتے تھے ۔ 
Tom Kmiec نے ایوان کے تمام ممبران سے کہاکہ وہ پاکستان میں بلوچوں، غیرمسلموں اورمہاجروں کے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی مذمت کریں، فرقہ وارانہ و لسانی تشدد کے خاتمے اورکینیڈا کے فرائض اجاگر کرنے کیلئے آگے بڑھ کر کام کریں ۔
*****


11/21/2018 2:31:11 AM