Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

پوری فوج دائرہ اسلام سے خارج ہوچکی ہے، لہذا کسی مستند مفتی کے سامنے کلمہ طیبہ پڑھ کر تجدید اسلام کریں۔ الطاف حسین


پوری فوج دائرہ اسلام سے خارج ہوچکی ہے، لہذا کسی مستند مفتی کے سامنے کلمہ طیبہ پڑھ کر تجدید اسلام کریں۔ الطاف حسین
 Posted on: 11/28/2017
پوری فوج دائرہ اسلام سے خارج ہوچکی ہے، لہذا کسی مستند مفتی کے سامنے کلمہ طیبہ پڑھ کر تجدید اسلام کریں۔ الطاف حسین


متحدہ قومی موومنٹ کے بانی وقائد جناب الطاف حسین نے پاکستان کے تمام مفتیان کرام اور تمام مکتب فکر کے جید و مستند علماء کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ موجودہ فوج کا ہر افسر حتیٰ کے سپاہی تک خارج از اسلام ہوچکا ہے کیونکہ انہوں نے اللہ تعالیٰ کو گواہ بنا کر حلف اٹھایا تھا کہ کہ وہ کسی قسم کے سیاسی معاملات میں مداخلت نہیں کریں گے اور وہ اس حلف کی صریحاً خلاف ورزی کے مرتکب ہوئے ہیں۔ چاھے وہ جرنیل ہوں یا ان کے احکامات کی بجا آوری کرنے والے سپاہی، وہ بھی خارج از اسلام قرار پائیں گے۔جناب الطاف حسین نے کہا کہ وہ آئین میں درج حلف نامے کو عوام کے سامنے رکھنا چاہتے ہیں جو مستند ہی نہیں بلکہ آج تک فوج میں شمولیت اختیار کرنے والارکنیت فارم بھرنے کے بعد عملی سرگرمیوں میں حصہ لینے سے پہلے اٹھانے کا پابند ہے۔ حلف نامہ درج ذیل ہے:


مسلح افواج کے ارکان

(آرٹیکل ۲۴۴)
بسم اللہ الرحمن الرحیم
(شروع کرتا ہوں اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم کرنے والا ہے)

میں، ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ، صدق دل سے حلف اٹھاتا ہوں کہ میں خلوص نیت سے پاکستان کا حامی اور وفادار رہوں گا اور اسلامی جمہوریہ پاکستان کے دستور کی حمایت کروں گا جو عوام کی خواہشات کا مظہر ہے، اور یہ کہ میں اپنے آپ کو کسی بھی قسم کی سیاسی سرگرمیوں میں مشغول نہیں کروں گا اور یہ کہ میں مقتضیات قانون کے مطابق اور اس کے تحت پاکستان کی بری فوج(یا بحری یا فضائی فوج) میں پاکستان کی خدمت ایمانداری اور وفاداری کے ساتھ انجام دوں گا۔
(اللہ تعالیٰ میری مدد اور رہنمائی فرمائے۔ آمین)

مندرجہ بالا مستند حلف نامہ دیکھنے اور پڑھنے کے بعد آپ کیا نہیں جانتے کہ دستور کو کتنی بار فوج نے توڑا اور آج تک فوج سیاست میں بلواسطہ یا بلاواسطہ مداخلت کرتی رہی ہے۔ ان کے اس عمل کے تحت وہ سب خارج از اسلام ہوچکے ہیں۔ لہذا انہیں تجدید اسلام کے لئے اپنے گناہوں کی توبہ کرنے کے ساتھ دوبارہ حلف اٹھانے سے پہلے کلمہ توحید اور کلمہ شہادت پڑھنا ہوگا۔ کسی بھی مستند، شرعی ، ایماندار، اور دیانت دار عالم کے سامنے جو شرع اسلام کے تحت فتویٰ صادر کرنے کا جواز اور اختیار بھی رکھتے ہوں ۔ بصورت دیگر ایسا نہ کرنے کی صورت میں پوری پاکستانی فوج غیر مسلم فوج قرار پائے گی۔

منجانب: الطاف حسین ولد نذیر حسین مرحوم رحمتہ اللہ علیہ
سگا پوتا مفتی شہر آگرہ، وعظ ، حافظ قرآن، مفکر اسلام، خطیب و امام جامع مسجد آگرہ
28 نومبر 2017ء بروز منگل
بوقت صبح 3.00بجے

نوٹ
جو موجودہ فوج کے تجدید ایمان نہ کرنے کی صورت میں ان کی حمایت و عمل پیرگی کرنے کے مرتکب ہوں گے وہ بھی دائرہ اسلام سے خارج تصور کئے جائیں گے۔ واللہ عالم بالصواب
جو تاریخ شرعی تاریخ کی تمام کتابوں میں موجود ہے اس کے مطابق یہ فتوی جاری کیا گیاہے۔ اگر کوئی کہے کہ فتویٰ جاری کرنے کا اختیار الطاف حسین کو بغیر کسی سند کیسے مل سکتا ہے تو بات بہت دور جاکر خلفاء راشدین تک جاپہنچے گی۔ لہذا بہتر ہے کہ اس پر شور و واویلا کرنے کی بجائے عمل کرلیا جائے تو بہتر ہے ورنہ ہر مناظرے کے لئے ہر مستند مفتی کے سامنے حاضر ہونے کے لئے تیار ہوں۔
مزید براں حلف توڑنے والے فوجی افسران کو اپنے حلف توڑنے کا کفارہ ادا کرنا ہوگا، اگر نہیں تو وہ ہر صورت میں دائرہ اسلام سے خارج ہیں۔ اب اس کا کیا کفارہ ادا کیا جائے تو اس کے لئے اپنے قریبی مستند مفتی سے پوچھا جائے کہ بڑی قسم توڑنے کا کفارہ کیا ہوتا ہے کہ جس سے ملک کی سلامتی و انسانی جان و مال خطرے میں پڑنے کا اندیشہ ہے۔ ایسی گستاخی کرنے کا کفارہ کیا ہوگا؟

12/12/2017 11:53:35 AM