Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

رکن سندھ اسمبلی کامران فاروق کو مختلف مقدمات میں ملوث کرناقابل مذمت ہے ۔ رابطہ کمیٹی متحدہ قومی موومنٹ


رکن سندھ اسمبلی کامران فاروق کو مختلف مقدمات میں ملوث کرناقابل مذمت ہے ۔ رابطہ کمیٹی متحدہ قومی موومنٹ
 Posted on: 12/17/2016
رکن سندھ اسمبلی کامران فاروق کو مختلف مقدمات میں ملوث کرناقابل مذمت ہے ۔ رابطہ کمیٹی متحدہ قومی موومنٹ
کامران فاروق سندھ اسمبلی کے رکن اورلاکھوں عوام کے منتخب نمائندے ہیں لیکن انہیں آج منہ پر چادرڈال کرایک خطرناک
عادی مجرم اوردہشت گردکی طرح عدالت میں پیش کیاگیا
کامران فاروق کو جھوٹے مقدمات میں ملوث کرنا اورانہیں ایک دہشت گرد کی طرح عدالت میں پیش کر ناایم کیوایم کے خلاف کرمنلائزیشن پالیسی کاحصہ ہے۔ رابطہ کمیٹی
2011ء میں مہاجربستیوں پرمسلح حملے کرنے والے اور ایم کیوایم کے کارکنوں اور ہمدرد مہاجروں کوبسوں سے اتار اتار کر
انہیں بیدردی سے شہید کرنے والے کب گرفتارہونگے؟ رابطہ کمیٹی
ایم کیوایم کے کارکنوں اور ہمدرد مہاجروں کے گلے کاٹنے والے اوران کے جسموں کے ٹکڑ ے ٹکڑے کرنے والے درندہ صفت
دہشت گرد کب گرفتار کئے جائیں گے؟ رابطہ کمیٹی
سفاک قاتلوں کی سرپرستی کرنے والے پیپلزپارٹی کے وزیرداخلہ ذوالفقارمرزا اوردیگر بڑے نام قانون کی گرفت میں کب آئیں گے؟ 
رکن سندھ اسمبلی کامران فاروق اوردیگرتمام اسیررہنماؤں اورکارکنوں کوفی الفوررہاکیاجائے۔ رابطہ کمیٹی

متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے ایم کیوایم کے رکن سندھ اسمبلی کامران فاروق کو مختلف مقدمات میں ملوث کرنے کی شدیدمذمت کی ہے ۔ اپنے ایک بیان میں رابطہ کمیٹی نے کہاکہ ایم کیوایم کے رہنماؤں، ارکان اسمبلی ، عہدیداروں اورکارکنوں کوگرفتارکرکے انہیں جھوٹے مقدمات میں ملوث کرنے کاایک سلسلہ جاری ہے ، رکن اسمبلی محمد کامران فاروق کوگرفتارکرکے انہیں مختلف جھوٹے مقدمات میں ملوث کردیاگیاہے،حتیٰ کہ ان پر موٹرسائیکل چوری تک کابیہود الزام لگادیاگیاہے ۔رابطہ کمیٹی نے کہاکہ کامران فاروق سندھ اسمبلی کے رکن اورلاکھوں عوام کے منتخب نمائندے ہیں لیکن انہیں آج منہ پر چادرڈال کرایک خطرناک عادی مجرم اوردہشت گردکی طرح عدالت میں پیش کیاگیاہے جسکی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے ۔ رابطہ کمیٹی نے کہاکہ کامران فاروق کو جھوٹے مقدمات میں ملوث کرنا اورانہیں ایک مجرم اوردہشت گرد کی طرح عدالت میں پیش کرنے کایہ عمل ایم کیوایم کے خلاف کرمنلائزیشن پالیسی کاحصہ ہے۔ رابطہ کمیٹی نے مزیدکہا کہ جمہوریت کی نام نہادعلمبردار پیپلزپارٹی کی سندھ حکومت ایم کیوایم کو سیاسی طورپرکچلنے کیلئے اس کے رہنماؤں، منتخب نمائندوں اور کارکنوں کوسیاسی انتقام کا نشانہ بنا رہی ہے۔رابطہ کمیٹی نے سوال کیاکہ 2011ء میں پیپلزپارٹی کے دورحکومت میں مہاجربستیوں پرمسلح حملے کرنے والے اور لیاری ،کٹی پہاڑی،اورنگی ٹاؤن اور دیگر علاقوں میں ایم کیوایم کے کارکنوں اور ہمدرد مہاجروں کوبسوں سے اتار اتار کر ان کی شناخت کرنے کے بعد انہیں بیدردی سے شہید کرنے والے، سفاکی سے ان کے گلے کاٹنے والے اورانکے جسموں کے ٹکڑ ے ٹکڑے کرنے والے درندہ صفت دہشت گرد کب گرفتار کئے جائیں گے؟ ان سفاک قاتلوں کی سرپرستی کرنے والے پیپلزپارٹی کے اس وقت کے وزیرداخلہ ذوالفقارمرزا ،دیگر وزراء اوربڑے بڑے نام قانون کی گرفت میں کب آئیں گے؟ رابطہ کمیٹی نے کہاکہ پیپلزپارٹی کی حکومت نے ماضی کی طرح ایک بارپھرکراچی اورسندھ کے شہری علاقوں میں آمریت قائم رکھی ہے اوروہ حکومتی طاقت کے ذریعے ایم کیوایم کوکچلنے کی پالیسی پر گامزن ہے ۔ رابطہ کمیٹی نے مطالبہ کیاکہ ایم کیوایم کے رہنماؤں، ارکان اسمبلی اورذمہ داروں پر جھوٹے مقدمات قائم کرنے کاسلسلہ بندکیاجائے اوررکن سندھ اسمبلی کامران فاروق اوردیگرتمام اسیررہنماؤں اورکارکنوں کوفی الفوررہاکیاجائے۔ 


1/24/2017 11:22:00 AM