Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

سرکاری سرپرستی میں حقیقی اور پی ایس پی کی کراچی میں دہشت گردی


سرکاری سرپرستی میں حقیقی اور پی ایس پی کی کراچی میں دہشت گردی
 Posted on: 9/29/2016
اپنی ہی قوم کے لوگوں پر بہیمانہ مظالم اورسفاکانہ تشددکے واقعات

جرائم پیشہ حقیقی دہشت گرد اور پی ایس پی کے غنڈہ عناصر آپس میں مل بیٹھے ہیں کیونکہ ان کا ایجنڈا ایک ہی ہے۔ حقیقی دہشت گرد لانڈھی ،کورنگی ، ملیر ، شاہ فیصل ، لائنز ایر یا میں ایم کیوایم کے کارکنان کوتشددکے ذریعے ایم کیوایم چھوڑ نے پر مجبور کررہے ہیں اور انکار پر سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہے ہیں جبکہ ان دہشت گرد وں کی جانب سے ایم کیوایم کے کارکنان کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا جارہا ہے اور تشدد کے دوران ایسی شرم ناک حرکتیں کررہے ہیں جنہیں بیان کرنے کیلئے الفاظ کا استعمال بھی ممکن نہیں ہے۔ جرائم پیشہ عناصر کو ایم کیوایم کے ذمہ داران و کارکنان کو قتل کرنے ، انہیں تشدد کانشانہ بنانے ،ایم کیوایم چھوڑنے پر مجبور کرنے اور گھروں سے بے دخل کرنے کا کھلا لائنس دیدیا گیا ہے ۔ لائنز ایر یاکے علاقے میں بد ھ کو جرائم پیشہ عناصر نے ایم کیوایم کے کارکنان رضوان کو تشد د کانشانہ بنایا جو انسانیت کی کھلی توہین اور تذلیل ہے۔ ایم کیوایم کے کارکن عثمان کو تشد د کانشانہ بنانے کے بعد زبر دستی شراب پلا کر تھانے میں بند کر ادیا۔اسی طرح محمد آصف کو تشدد کا نشانہ بنایا او دھمکیاں دیں کہ وہ گھرچھوڑکر علاقہ سے چلے جائیں ۔منور علی کو حقیقی دہشت گردوں نے تشددکرکے انہیں انکے گھر سے نکال کر قبضہ کر لیا جس کی وجہ منور علی دل کا درہ پڑا اور وہ جاں بحق ہوگئے ۔حقیقی دہشت گر دوں نے ایم کیوایم کے نوجوان اور بزرگ کارکنوں کو ہی تشددکانشانہ نہیں بنایابلکہ خواتین کارکنوں تک کودہشت گردی کانشانہ بنایا۔ دہشت گردوں نے بربریت کامظاہرہ کرتے ہوئے ایک خاتون کارکن غزالہ پر موٹر سائیکل چڑھا دی،انہیں ماراپیٹا،ان سے موبائل اور نقدی چھین لی اور انہیں گالیاں دیں۔ دہشت گردوں نے ایم کیوایم کے کونسلر رشید کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا او ر سنگین نتائج دھمکیا ں دیں۔ندیم خواجہ کو انسانیت سوز تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد معافی نامہ لکھنے پر مجبور کیا اور دھمکی دی کہ اگر معافی نامہ نہیں لکھتے تو گھر چھوڑ کر چلے جاؤ ۔انہوں نے ایم کیوایم کے ایک کارکن جاوید کے بیٹے کو تشدد کا نشانہ بنا یا جبکہ ایم کیوایم کے کارکن الہٰی ، شاہ رخ اور فیصل مغل کو گھر پر آکر دھمکیاں دیں اور فیصل مغل کا رکشہ جس سے وہ روزی کماتے تھے اسے توڑ پھوڑکرتباہ کرڈالا ۔ 7ستمبر 2016ء کو حقیقی دہشت گر دوں نے لائنز ایریا یوسی 9میں ایم کیوایم کے ایک اور کارکن شعیب کو تشدد کا نشانہ بنایااورانہیں گھر چھوڑنے کی دھمکی دی ۔اسی طرح کارکن فہیم احمد کے گھر جاکر دھمکی دی اور ان کے چھوٹے بھائیوں کو ماراپیٹا ، دہشت گردوں نے یوسی9 کے لیبر کونسلرمحمد ارشدکوتشدد کا نشانہ بنایا جبکہ انہیں مسلسل دھمکیاں دی جارہی ہیں۔ ندیم خورشید ،اقلیتی کونسلر جوزف مسیح ، محمد آصف ،عدنان ، محمد عظیم،محمد عرفان ،آصف ، شاہد ،نذیر احمد ، سلمان ،تسلیم آصف ، اعظم ، شفیق الدین ، عمر شفیق ٹاؤن ممبر محمد عارف کو بھی دہشت گردوں نے بہیمانہ تشدد کانشانہ بنایا اور انہیں گھر خالی کرنے کی دھمکیاں دی۔حقیقی دہشت گرد ایم کیوایم کے کارکنوں کو کس بیدردی اورسفاکی سے بہیمانہ تشددکانشانہ بنارہے ہیں اس کااندازہ اس بات سے لگایاجاسکتاہے کہ ایک کارکن انجم ولی کی یادداشت چلی گئی ۔سرکاری ایجنسیوں کی سرپرستی میں ایم کیوایم کے ذمہ داران وکارکنان پر عرصہ حیات تنگ کیا جارہا ہے ۔ اور انہیں گھر بار چھوڑ نے پر مجبور کر رہے ہیں ۔ پولیس اوررینجرز اس تمام ترصورتحال سے مکمل طورپرآگاہ ہے لیکن انکی جانب سے اس کی روک تھام کے لئے کوئی کارروائی نہیں کی جارہی ہے جس سے صاف ظاہرہوتاہے کہ حقیقی دہشت گردوں کومکمل سرکاری سرپرستی حاصل ہے ۔
ایک طرف یہ صورتحال جاری ہے اوردوسری جانب کورنگی اوردیگرعلاقوں میں پی ایس پی کی جانب سے ایم کیوایم کے کارکنوں کودھمکیاں دے کر سیاسی وفاداری تبدیل کرنے پر مجبورکیاجارہاہے اورجوکارکنان اپنی وفاداریاں تبدیل کرنے سے انکارکررہے ہیں انہیں رینجرزکے ہاتھوں گرفتارکروایاجارہاہے اورحراست میں تشددکانشانہ بنایاجارہاہے ۔اسکے ساتھ ساتھ سرکاری اداروں کی جانب سے ایم کیوایم کے لاپتہ کارکنوں کے اہل خانہ پر بھی دباؤ ڈالا جارہاہے کہ اگروہ اپنے پیاروں کی بازیابی چاہتے ہیں توپی ایس پی میں شامل ہوجائیں۔ یہ ساری صورتحال اس حقیقت کوثابت کرتی ہے کہ آپریشن کامقصدکراچی میں امن کا قیام نہیں بلکہ ایم کیوایم کوختم کرناہے۔ 

12/8/2016 9:55:18 PM