Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

میری جان کو خطرہ ہے، سادہ لباس اہلکار مجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں مجھے تحفظ فراہم کیا جائے، نورین کی اپیل


میری جان کو خطرہ ہے، سادہ لباس اہلکار مجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں مجھے تحفظ فراہم کیا جائے، نورین کی اپیل
 Posted on: 7/30/2016
میری جان کو خطرہ ہے، سادہ لباس اہلکار مجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں مجھے تحفظ فراہم کیا جائے، نورین کی اپیل
میرے شوہر آصف بے قصور ہیں ان کا وقاص علی شاہ کے قتل سے قطعی کوئی تعلق نہیں، نورین آصف
وقاص علی شاہ قتل کیس میں رینجرز کی جانب سے گرفتار ایم کیوایم کے کارکن آصف کی اہلیہ کی پریس کلب کراچی میں پریس کانفرنس
کراچی ۔۔۔30جو لا ئی 2016ء
متحد ہ قومی مو ومنٹ شعبہ اطلاعات کے رکن وقاص علی شاہ قتل کے مبینہ الز ام میں رینجرزکی جانب سے گر فتارکئے گئے ایم کیوایم کے کارکن آصف کی اہلیہ نورین نے اپیل کی ہے کہ انہیں تحفظ فراہم کیاجائے ۔انہوں نے کہاکہ میر ی جا ن کو خطر ہ ہے، سادہ لباس اہلکارمجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں مجھے تحفظ فراہم کیاجائے۔ انہوں نے کہا کہ میرے شوہر آصف بے قصورہیں انہیں فوری طور پر رہا کیا جائے، ان کا وقاص علی شاہ کے قتل سے قطعی کوئی تعلق نہیں۔ان خیالات کا اظہارانہوں نے ہفتے کی شام وکیل لطیف صلاؤالدین کے ہمراہ کر اچی پر یس کلب میں پریس کانفر نس اہم کے دوران کیا۔نورین آصف نے اپنے شوہرآصف پرلگائے گئے الزامات کی شدیدالفاظ میں تریداورمذمت کی اورکہاکہ وقاص علی شاہ کے قتل سے آصف کا کو ئی تعلق نہیں ہے آصف بالکل بے قصور ہے ۔اور آصف کی اہلیہ نو رین نے کہاکہ نا ئن زیر و پر 11ما رچ کو چھاپہ پڑا تو میں اپنے شوہر کے ساتھ موجود تھی رینجرز اہلکار نے ہی گولی چلائی جو آصف کوچھوتی ہوئی وقاص علی شاہ کوجالگی۔ انہوں نے بتایاکہ9مئی کو آصف کو سادہ لباس اہلکار اپنے ساتھ گا ڑی میں گرفتار کر کے لے گئے تھے اور 25جو ن کو مجھے معلوم ہوا کہ وقاص علی شاہ کے قتل میں گر فتار کیا گیا ہے اور 6جون کو انہیں گلبرگ تھانے میں دے دیا گیا۔انہوں نے مزیدکہاکہ مجھے دھمکیاں دی جا رہی ہے تم آصف کے کیس سے پیچھے ہوجاؤ ورنہ جان سے ماردی جاؤں گی ۔انہوں نے کہاکہ کل را ت سادہ لبا س نقاب پو ش آدمی میرے گھر آیا اور مجھے بولنے لگا کے آصف کو ماردیا ہے اس کی لاش ایدھی سر دخا نہ سے لے لو۔نورین نے کہاکہ میر ی جا ن کو خطر ہ ہے ۔انہوں نے اپیل کی کہ مجھے سندھ حکومت ،صوبائی وزیر داخلہ ،ڈی جی رینجرز اور آئی جی سندھ فوری طورپرتحفظ فر اہم کریں۔

12/10/2016 8:11:45 PM