Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین کے میڈیا بلیک آؤٹ کے خلاف ایم کیوایم امریکہ کے تحت دوسرے روز علامتی بھوک ہڑتال کے سلسلے میں وائٹ ہاؤس پر بھوک ہڑتال


ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین کے میڈیا بلیک آؤٹ کے خلاف ایم کیوایم امریکہ کے تحت دوسرے روز علامتی بھوک ہڑتال کے سلسلے میں وائٹ ہاؤس پر بھوک ہڑتال
 Posted on: 2/21/2016
ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین کے میڈیا بلیک آؤٹ کے خلاف ایم کیوایم امریکہ کے تحت دوسرے روز علامتی بھوک ہڑتال کے سلسلے میں وائٹ ہاؤس پر بھوک ہڑتال 
علامتی بھوک ہڑتال میں سینٹرل آرگنائزنگ کمیٹی، کمیونیکیشن اینڈ میڈیا سیل، واشنگٹن کے ذمہ داران، کارکنان کی بڑی تعداد میں شرکت
پاکستان میں الطاف حسین کی تقاریر اور تصاویر کے نشر و اشاعت پر غیر آئینی پابندی کے خلاف وائٹ ہاؤس میں پٹیشن بھی جمع کرائی گئی
واشنگٹن ڈی سی ۔۔۔ 21؍ فروری 2016ء
پاکستان میں متحدہ قومی موومنٹ قائد کے قائد جناب الطاف حسین کی تقاریر، تصاویر اور بیانات کی نشر واشاعت پر میں گزشتہ کئی ماہ سے عائد پابندی اور میڈیا بلیک آؤٹ کے خلاف امریکہ میں احتجاج مظاہرے کا سلسلہ جاری ہے ۔ احتجاجی مظاہرے کے سلسلے کے دوسرے روز واشنگٹن میں وہائٹ ہاؤس کے سامنے ایم کیو ایم امریکہ کے واشنگٹن کے زیر اہتمام احتجاجی مظاہرہ اور علامتی بھوک ہڑتال کی گئی۔ احتجاجی مظاہرے اور علامتی بھوک ہڑتال میں متحدہ قوی موومنٹ امریکہ کی سینٹرل آرگنائزنگ کمیٹی کے اراکین متین یوسف اور عارف صدیقی ،کمیونیکیشن اینڈ میڈیا سیل کے انچاج عمران حسین، واشنگٹن چیپٹر کے انچارج اظہار خان، جوائنٹ چیپٹر انچارج حفیط الحق، ایم کیو ایم امریکہ کے کارکنان و ذمہ داران سمیت واشنگٹن اور قریبی ریاستوں میں مقیم پاکستانی کمیونٹی سے تعلق رکھنے والے مرد و خواتین اور بچوں نے بڑی تعدادمیں شرکت کی۔ اس موقع پر شرکاء نے اپنے ہاتھوں میں الطاف حسین پر غیر جمہوری ، غیر آینی پابندی و میڈیا بلیک آؤ ٹ کے خلاف اور الطاف حسین کے حق میں پر جوش انداز میں نعرے لگا کر اپنے قائد سے اپنی والہانہ عقیدت ومحبت کا اظہار کررہے تھے۔ ایم کیو ایم امریکہ کی سینٹرل آرگنائزنگ کمیٹی کے رکن متین یوسف نے قائد تحریک الطاف حسین کی تقاریر اور بیانات پر عائد پابندی کو جمہوری آمریت سے تشبیہ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں جمہوریت کا جعلی نظام رائج ہے جس میں پاکستان کی نام نہاد اشرافیہ اور خود ساختہ فرزندِ زمین اگر افواج پاکستان کو بھی گالیاں دیں تو وہ وفادار وطن رہتے ہیں اور جرنیلوں کے کانوں پر بھی کوئی جوں نہیں رینگتی ۔ مگر جب بات الطاف حسین اور مہاجروں کی ہو تی ہے تعصب پوری شدت سے سامنے آجاتا ہے۔پھر نہ کسی کو جمہوریت یادرہتی ہے اور نہ ہی عام آدمی کو بنیادی حقوق کی آزادی ۔ الطاف حسین کی تحریک اس ہی دہرے اور امتیازی نظام کے خلاف ہے جو مقتدر استحصالی عناصر کو ناپسندہے مگر صرف مخلصی پاکستان میں صرف پاکستان کے امن و استحکام کی خاطر اس کا خمیازہ الطاف حسین اور پوری مہاجر قوم گزشتہ کئی دہائیوں سے بھگت رہی ہے۔ سینٹرل کمیٹی کے رکن عارف صدیقی نے شرکاء سے خطاب میں کہا ک جناب الطاف حسین پر عائد پابندی دراصل سچائی پر پابندی ہے۔ اس پابندی سے قائد تحریک کی آزادی اظہار ہی نہیں بلکہ کروڑوں پاکستانیوں جو انکو دیکھنا اور سننا چاہتے انہیں ان کے بنیادی حق سے محروم کیا جارہا ہے۔ مظاہرین نے مطالبہ کیا کہ پاکستان میں جناب الطاف حسین کی تقریرو تصاویر اور بیانات پر عائد غیرآئینی پابندی فی الفور ختم کی جائے تاکہ دنیا بھر میں موجود انکے کروڑوں چاہنے والوں میں پائی جانے والی بے چینی کا خاتمہ ہو سکے۔ اس موقع پر غیر آئنی پابندی کے خلاف وہائٹ ہاؤس میں پٹیشن بھی جمع کرائی گئی۔ 







9/27/2016 12:14:29 PM