Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین کے بیانات ،تقریر اور تصویر پر عائد غیر جمہوری اور متعصبانہ پابندی کے خلاف احتجاجی مہم کے سلسلے میں جمعرات کے روز متحدہ قومی موومنٹ لیبر ڈویژن کے زیراہتمام کراچی پریس کلب کے باہر زبردست احتجاجی مظاہرہ


ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین کے بیانات ،تقریر اور تصویر پر عائد غیر جمہوری اور متعصبانہ پابندی کے خلاف احتجاجی مہم کے سلسلے میں جمعرات کے روز متحدہ قومی موومنٹ لیبر ڈویژن کے زیراہتمام کراچی پریس کلب کے باہر زبردست احتجاجی مظاہرہ
 Posted on: 1/28/2016
ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین کے بیانات ،تقریر اور تصویر پر عائد غیر جمہوری اور متعصبانہ پابندی کے خلاف احتجاجی مہم کے سلسلے میں جمعرات کے روز متحدہ قومی موومنٹ لیبر ڈویژن کے زیراہتمام کراچی پریس کلب کے باہر زبردست احتجاجی مظاہرہ
احتجاجی مظاہرے میں محنت کشوں نے جناب الطاف حسین پر سے عائد پابندی کو اٹھانے کا مطالبہ کیا اور اپنا پرامن احتجاج ریکارڈ کرایا
مظاہرے کے شرکاء نے اپنے چہرے پر جناب الطاف حسین کی تصویر کے نقاب پہن رکھے تھے 
’’قائد تحریک کی تقریر ، تصویر اور بیانات پر پابندی آئین کی خلاف ورزی ہے،‘‘’’الطاف حسین جراتِ اظہار کا مینار ‘‘ 
جناب الطاف حسین پر سے غیر جمہوری پابندی کا خاتمہ کیاجائے ، شرکاء کے پلے کارڈز اوربینرز
ایم کیوایم لیبر ڈویژن کے احتجاجی مظاہرے میں پی ٹی سی ایل ، کے ڈی اے ، کے ایم سی ، واٹر اینڈ سیوریج بورڈ ، ایجوکیشن ، سیسی ، یوبی ایل ، حبیب بنک ، اسٹیل مل ، ایس بی سی اے اور دیگر سرکاری و نیم سرکاری اداروں ، سی بی ایز ، یونین اور محنت کشوں کی شرکت 
کراچی ۔۔۔28، جنوری 2016ء 
ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین کے بیانات ،تقریر اور تصویر پر عائد غیر جمہوری اور متعصبانہ پابندی کے خلاف احتجاجی مہم کے سلسلے میں جمعرات کے روز متحدہ قومی موومنٹ لیبر ڈویژن کے زیراہتمام کراچی پریس کلب کے باہر زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا گیاجس میں شریک ہزاروں محنت کشوں نے جناب الطا ف حسین کی تحریر ، تقریر اور تصویر پر عائد غیر جمہوری پابندی کے خلاف اپنابھر پور پرامن احتجاج ریکارڈ کرایا اور جناب الطاف حسین پر سے غیر آئینی پابندی اٹھانے کا مطالبہ کیا ۔احتجاجی مظاہرے کے شرکاء دوپہر 12:00بجے سے ہی کراچی پریس کلب پر پہنچنا شروع ہوگئے تھے اور انہوں نے اپنے ہاتھوں میں قائد تحریک جناب الطاف حسین کی تصاویر ، ایم کیوایم کے پرچم ،سبز ہلالی پرچم ، بینرز اور پلے کارڈذ اٹھا رکھے تھے ۔ اردو اورانگریزی زبان میں بینرز اور پلے کارڈز پر’’حکمرانوں ! بیانیان پاکستان کی اولادوں کے ساتھ ناانصافی اورپرتعصب رویہ بند کرو ‘‘’’قائد تحریک کی تقریر ، تصویر اور بیانات پر پابندی آئین کی خلاف ورزی ہے ،‘‘’’الطاف حسین جراتِ اظہار کا مینار ‘‘ جناب الطاف حسین کے خطابات پر سے غیر جمہوری پابندی کا خاتمہ کیاجائے ‘‘’’لاہور ہائی کورٹ سے اپیل ہے کہ انصاف کے تقاضے پورے کئے جائیں ‘‘’’’ظلم کے ضابطے ہم نہیں مانتے ‘‘’’اظہار حق پر پابندی ۔ نامنظور ‘‘’’نظروں سے ہٹاؤ گے تو ذہنوں میں بسیں گے ، الطاف ہی اس ملک کی تقدیر بنیں گے ‘‘اور دیگر مذمتی کلمات ، مطالبات اور نعرے جلی حروف میں درج تھے ۔ مظاہرے کے شرکاء ’’ہم نہ ہوں ہمارے بعد الطاف الطاف ‘‘’’الطاف حسین پر غیر جمہوری پابندی کا خاتمہ کرو ‘‘’’انصاف کے تقاضے پورے کرو ‘‘’’رہبر ہبر الطاف ہمارا رہبر ‘‘’’ذرا زور سے بولو متحدہ ‘‘’’نہ ڈرنے والی متحدہ ، نہ جھکنے ولی متحدہ ‘‘اور دیگر نعرے پرجوش انداز میں لگار ہے تھے ۔ احتجاجی مظاہرے میں ایم کیوایم لیبر ڈویژن کے پی ٹی سی ایل ، کے ڈی اے ، کے ایم سی ، واٹر اینڈ سیوریج بورڈ ، ایجوکیشن ، سیسی ، یوبی ایل ، حبیب بنک ، اسٹیل مل ، ایس بی سی اے ، سوئی سدرن گیس ، ہمدرد یونیورسٹی ، کچی آبادی اور یونٹوں کے ذمہ داران و کارکنان اور محنت کشوں نے ہزاروں کی تعداد میں شرکت کی ۔ قائد تحریک جناب الطاف حسین کی تحریر ، تقریر اور تصویر پر عائد غیر جمہوری پابندی کے خلاف کراچی پریس کلب کے باہر ہونے والے احتجاجی مظاہرے میں سب سے پہلے ایم کیوایم لیبر ڈویژن کے ایم سی یونٹ کی ریلی پہنچی جس کا اسٹیج سے زبردست خیر مقدم کیا ۔ احتجاجی مظاہرے کے شرکاء نے اپنے چہروں پر جناب الطاف حسین کی تصاویر کے نقاب پہن رکھے تھے ۔ احتجاجی مظاہرے میں سرکاری اور نیم سرکاری اداروں سے تعلق رکھنے والی سی بی ایز ، یونین اور مزدور ں نے بھی کثیر تعداد میں شرکت کی اور جناب الطاف حسین پر اظہار رائے کی پابندی کے خلاف اپنا احتجاج ریکارڈ کرایا جناب الطاف حسین کے خطاب کے دوران ایک محنت کش نے یہ نغمہ گایا کہ قائد کے جیسے قائد کہاں ۔اس موقع پر پنجابی، سندھی ، بلوچی ، سرائیکی اور دیگر قومیتوں کے نوجوانوں ،بزرگوں نے قائد تحریک جناب الطاف حسین سے خطاب کے دوران ان سے گفتگو کی اور اپنی اپنی مادری زبان میں جناب الطاف حسین سے اظہار یکجہتی کیا اور تحریر ، تقریراور تصویر پر عائد پابندی کی سخت ترین الفاظ میں مذمت کی ۔ احتجاجی مظاہرے میں ایم کیوایم کی رابطہ کمیٹی کے ارکان عبد الحسیب ، عادل خان ، ایم کیوایم لیبر ڈویژن کے انچارج اسد کاظمی ، لیبر ڈویژن کی مرکزی کمیٹی کے اراکین بھی موجود تھے ۔ احتجاجی مظاہرے کے شرکاء سے ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین نے لندن سے خصوصی طور پر ٹیلی فونک خطاب کیا جبکہ اس سے قبل ایم کیوایم لیبر ڈویژن کے جوائنٹ انچارجزانجینئر کاشف اور ارشد انصاری نے احتجاجی مظاہرے کے شرکاء سے خطاب کیا ۔ احتجاجی مظاہرے کے شرکاء کا جوش و خروش قابل دید تھا جبکہ محنت کش خواتین اپنے بچوں کے ہمراہ احتجاجی مظاہرے میں شریک ہوئیں ۔ احتجاجی مظاہرے کا باقاعدہ آغاز تلاوت کلام پاک سے کیا گیا جس کی سعادت فصیح الدین اشرفی نے حاصل کی ۔ بعدازاں ٹھیک 4بجکر 5منٹ پر قائد تحریک جناب الطاف حسین کی ٹیلی فون لائن پر آمد کا اعلان کیا گیا اس موقع پر حسب روایت ایم کیوایم کا ترانہ" مظلوموں کا ساتھی ہے الطاف حسین" کی ریکارڈنگ بجائی گئی جس کا شرکاء نے اپنی نشستوں سے کھڑے ہوکر تالیوں کی گونج میں ساتھ دیا اور جناب الطاف حسین کے حق میں زبردست نعرے لگائے جس کا سلسلہ کافی دیر تک جاری رہا ۔ 
  

12/3/2016 10:01:15 PM