Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

سانحہ 30 ستمبر1988ء پاکستان کی تاریخ کا سیاہ باب ہے جسے فراموش نہیں کیاجاسکتا۔الطاف حسین


سانحہ 30 ستمبر1988ء پاکستان کی تاریخ کا سیاہ باب ہے جسے فراموش نہیں کیاجاسکتا۔الطاف حسین
 Posted on: 9/30/2015
سانحہ 30 ستمبر1988ء پاکستان کی تاریخ کا سیاہ باب ہے جسے فراموش نہیں کیاجاسکتا۔الطاف حسین
30 ستمبر 88ء کو مسلح دہشت گردوں نے حیدرآبادکے مختلف علاقوں میں داخل ہوکرمعصوم وبے گناہ مہاجروں پرگولیاں برسائیں
سانحہ میں300سے زائدبے گناہ مہاجرماؤں بہنوں، بزرگوں،خواتین اوربچوں کوبیدردی سے شہید اورسینکڑوں کوزخمی کردیاگیا
آدھاگھنٹہ تک یہ قتل عام ہوتارہا لیکن فوج، رینجرز ، پولیس یاکوئی بھی قانون نافذ کرنے والا ادارہ مہاجروں کوبچانے نہیں آیا
اس سانحہ کوآج 27برس گزرگئے ہیں لیکن آج تک نہ تو سفاک قاتلوں کوگرفتارکرکے سزادی گئی اورنہ ہی اس قتل عام کی تحقیقات کی گئیں
ہمارے نوجوانوں کوتو برسوں پرانے جھوٹے مقدمات میں گرفتار کرلیا جاتا ہے لیکن مہاجروں کے وحشیانہ قتل عام میں ملوث قاتلوں کوگرفتارنہیں کیاجاتا
سانحہ 30 ستمبر کے شہداء کاخون رائیگاں نہیں جائے گا اورسفاک قاتلوں پر اللہ تعالیٰ کاعذاب نازل ہوگا۔ الطاف حسین
لندن ۔۔۔ 29 ستمبر 2015ء
متحدہ قومی موومنٹ کے قائدجناب الطاف حسین نے کہاہے کہ سانحہ 30 ستمبر1988ء پاکستان کی تاریخ کا سیاہ باب ہے جسے فراموش نہیں کیاجاسکتا۔ سانحہ 30ستمبر کی 27 ویں برسی کے موقع پر اپنے ایک بیان میں جناب الطاف حسین نے کہاکہ 30 ستمبر1988ء کو کئی گاڑیوں میں سوارمسلح دہشت گردوں نے حیدرآبادکے مختلف علاقوں کے بازاروں میں داخل ہوکردکانداروں،فٹ پاتھوں اورگھروں اوردکانوں کے باہربیٹھے لوگوں اور راہگیروں پر اندھا دھندگولیوں برسائیں، آدھاگھنٹہ تک قتل عام اورظلم و بربریت کایہ وحشیانہ کھیل جاری رہاجس کے دوران300سے زائدمعصوم وبے گناہ مہاجرماؤں بہنوں، بزرگوں،خواتین اوربچوں کوبیدردی سے شہیدکردیاگیااورسینکڑوں کوزخمی کردیاگیا۔ آدھاگھنٹہ تک یہ قتل عام ہوتارہا لیکن فوج، رینجرز ، پولیس یاکوئی بھی قانون نافذ کرنے والا ادارہ مہاجروں کوبچانے نہیں آیااوردہشت گردقتل عام کرکے آسانی کے ساتھ فرارہوگئے۔ جناب الطاف حسین نے کہاکہ سانحہ 30 ستمبرمعصوم وبے گناہ مہاجروں کے قتل عام اور ظلم وبربریت کاایسادردناک واقعہ ہے جسے بھلایانہیں جاسکتا۔انہوں نے کہاکہ اس سانحہ کوآج 27برس گزرگئے ہیں لیکن آج تک نہ تو اتنے بڑے قتل عام میں ملوث سفاک قاتلوں کوگرفتارکرکے سزادی گئی اورنہ ہی اس قتل عام کی تحقیقات کی گئیں ۔ جناب الطاف حسین نے کہاکہ ہمارے نوجوانوں کو تو جھوٹے اورمن گھڑت الزامات لگاکرانہیں برسوں پرانے جھوٹے مقدمات میں گرفتار کرلیا جاتا ہے لیکن مہاجروں کے بڑے پیمانے پر ہونے والے وحشیانہ قتل عام میں ملوث قاتلوں کوگرفتارنہیں کیاجاتا۔جناب الطاف حسین نے کہاکہ سانحہ 30 ستمبر 1988ء کے شہداء کاخون رائیگاں نہیں جائے گا اورسفاک قاتلوں پر اللہ تعالیٰ کاعذاب نازل ہوگا۔ جناب الطاف حسین نے شہداء کے لواحقین سے دلی ہمدردی کا اظہار کیااوردعا کی کہ اللہ تعالیٰ شہیدوں کواپنی جواررحمت میں جگہ دے اوران کے درجات بلندفرمائے اورتمام لواحقین کو صبرجمیل عطاکرے۔ 

9/28/2016 12:05:43 PM