Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

پرائیوٹ اسکول مالکان کی جانب سے فیسوں میں بیش بہا اضافے پر ایم کیو ایم کے مستعفی اراکین اسمبلی کی پرزور مذمت


پرائیوٹ اسکول مالکان کی جانب سے فیسوں میں بیش بہا اضافے پر ایم کیو ایم کے مستعفی اراکین اسمبلی کی پرزور مذمت
 Posted on: 9/16/2015
پرائیوٹ اسکول مالکان کی جانب سے فیسوں میں بیش بہا اضافے پر ایم کیو ایم کے مستعفی اراکین اسمبلی کی پرزور مذمت 
ملک کی حالیہ صورتحال کے پیش نظر تعلیم ہی ایک مؤثر ہتھیار ہے جس کے ذریعے دہشت گردی اور انتہاء پسندی پر قابو پایا جاسکتا ہے
پرائیوٹ اسکول مالکان کی جانب سے فیسوں میں حالیہ اضافے کا فی الفور نوٹس لیتے ہوئے اضافے کو واپس کروایا جائے
کراچی ۔۔۔ 16 ستمبر 2015ء
متحدہ قومی موومنٹ کے حق پرست مستعفی اراکین اسمبلی نے پرائیوٹ اسکول مالکان کی جانب سے اسکول فیسوں میں بیش بہا اضافے کی پرزور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایک ایسے ملک میں جہاں شرح تعلیم انتہائی نچلی سطح پر ہو وہاں تعلیمی فیسوں میں ہوشربا اضافہ کسی طور بھی ملکی مفاد میں نہیں ہوسکتا۔ ایک بیان میں ایم کیو ایم کے مستعفی اراکین اسمبلی نے کہا کہ ملک کی حالیہ صورتحال کے پیش نظر تعلیم ہی ایک مؤثر ہتھیار ہے جس کے ذریعے دہشت گردی اور انتہاء پسندی پر قابو پاسکتے ہیں، لیکن افسوس کہ آج تعلیم کوایک منافع بخش کاروبار سمجھ لیا گیا ہے جس کے ذریعے اسکول مالکان بچوں کی تعلیم و تربیت کے بجائے اپنے بینک اکاؤنٹس کی ترقی میں مصروف عمل ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ملک میں تیزی سے بڑھتی ہوئی مہنگائی کے پیش نظروالدین پہلے ہی سفیدپوشی کی زندگی گذارنے پرمجبورہیں جبکہ فیسوں میں اچانک اضافے سے ان کے گھریلواخراجات پرمنفی اثرات پڑیں گے ۔اُن کا مزید کہنا تھا کہ اس قسم کے اقدامات سے قوم کے مستقبل کے معماروں کوتعلیم سے دور کیا جارہا ہے جس سے ملک میں بے روزگاری اور بدامنی بڑھے گی۔ انہوں نے کہا کہ کسی بھی ملک کی ترقی اس ملک کے نوجوانوں کے ہاتھوں میں ہوتی ہے اور جس ملک کے نوجوان تعلیم یافتہ اور باشعور ہوتے ہیں وہ ملک ترقی کے منازل طے کرتے چلے جاتے ہیں اور اس کے برعکس جو ممالک اپنے نوجوانوں کی تعلیم و تربیت پر توجہ نہیں دیتے ان ممالک میں افراتفری اور انتشار پیدا ہوتا ہے۔ اس موقع پر مستعفی اراکین اسمبلی نے وزیراعظم،چاروں صوبوں کے وزیراعلیٰ اورصوبائی وزیر تعلیم سے مطالبہ کیا کہ اس قسم کے اقدمات کی مکمل روک تھام کیلئے ایک جامع تعلیمی پالیسی مرتب کی جائے جس کے ذریعے ملک کے ہر شہری کو یکساں تعلیمی مواقع میسر آئیں اور ملک میں رائج فرسودہ اوردہرا تعلیمی نظام کا خاتمہ کیا جاسکے اور پرائیوٹ اسکول مالکان کی جانب سے اسکول فیسوں میں حالیہ اضافہ کا فی الفور نوٹس لیتے ہوئے اسکول فیسوں میں اضافے کو واپس کروایا جائے۔

9/29/2016 8:30:48 PM