Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

عمران خان کیخلاف آرٹیکل 62،63کے تحت کارروائی کی جائے اس کے تمام دعوے اوروعدے جھوٹے ثابت ہوئے ،ڈاکٹرخالدمقبول صدیقی


عمران خان کیخلاف آرٹیکل 62،63کے تحت کارروائی کی جائے اس کے تمام دعوے اوروعدے جھوٹے ثابت ہوئے ،ڈاکٹرخالدمقبول صدیقی
 Posted on: 5/20/2013
عمران خان کیخلاف آرٹیکل 62،63کے تحت کارروائی کی جائے اس کے تمام دعوے اوروعدے جھوٹے ثابت ہوئے ،ڈاکٹرخالدمقبول صدیقی
عمران خان نے نئے پاکستان کے نام پر بیوقوف بنایا ہے اور لوگوں کو بے راہ روی کی جانب مائل کیا ہے ، وسیم آفتاب
عمران خان جیسے شخص کو لوگوں کی نمائندگی اور اسمبلی میں بیٹھنے کا حق حاصل نہیں ہے ،اس کی رکنیت معطل کی جائے ،ڈاکٹر صغیر احمد 
عمران خان نے قائدتحریک جناب الطاف حسین کو بدنام کرنے کی ناپاک سازش کی ہے ، گلفراز خان خٹک
کراچی پریس کلب کے باہرپرامن احتجاجی مظاہرے کے شرکاء سے خطاب
تصاویر
کراچی۔۔۔ 20مئی 2013
متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی کے ڈپٹی کنوینرونومنتخب رکن قومی اسمبلی ڈاکٹرخالدمقبول صدیقی نے کہاہے کہ عمران خان جھوٹاہے جس کے تمام دعوے اور وعدے بھی جھوٹے ثابت ہوئے ہیں،تحریک انصاف نے خواتین کو ووٹ ڈالنے کے حق سے محروم کرنے کے معاہدے پردستخط کیے،خیبرپختونخواہ میں جہاں ان کی حکومت بننے جارہی ہے وہاں کسی نوجوان کولانے کے بجائے 72سال کے کرپٹ آدمی کووزیراعلیٰ نامزدکیاجوپہلے ہی چارجماعتیں تبدیل کرچکاہے۔یہ باتیں انہوں نے کراچی پریس کلب کے باہر ایم کیو ایم کے احتجاجی مظاہرے سے خطاب کے دوران کیں۔اس سے قبل احتجاج مظاہرے سے ارکان رابطہ کمیٹی وسیم آفتاب،ڈاکٹرصغیراحمداورگلفرازخان خٹک کے علاوہ دیگرذمہ داران نے بھی خطاب کیا۔ عمران خان کیطرف سے قائد تحریک جناب الطاف حسین پربے بنیاد،بے ہودہ اوراورجھوٹے الزام پرایم کیوایم کی جانب سے پاکستان سمیت دنیا بھر میں پرامن احتجاجی مظاہروں کاسلسلہ جاری ہے جس میں قائدتحریک جناب الطاف حسین کے چاہنے والے لاکھوں عوام ازخودشرکت کررہے ہیں اورعمران خان کے خلاف سراپا احتجاج بنے ہوئے ہیں۔ ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے کہاکہ عمران خان جیسے مکارعیاراورعیاش شخص کی جانب سے قائدتحریک الطاف حسین پربے بنیاداورجھوٹے الزامات کے خلاف قائدتحریک جناب الطاف حسین کے لاکھوں چاہنے والے عوام سراپااحتجاج ہیں۔انہوں نے کہاکہ یہ شہرغیرتمندوں کاشہرہے آج کااحتجاجی مظاہرہ اس بات کیْ غمازی ہے کہ اس شہرکے غیرتمندبیٹے اپنے ہردل عزیز قائدتحریک سے اظہارِیکجہتی کیلئے گھروں سے باہرنکل آئے ہیں، زہراآپا اس شہرکی بیٹی تھیں جن کاخون بتارہاہے کہ ان کے قاتل عمران خان اوراس کی جماعت کے لوگ ہیں۔انہوں نے کہاکہ یہ شہر وفاداروں اورجانثاروں کا شہر ہے جو پاکستان کی سوچ لیکرآگے بڑھ رہے ہیں اورعوام کے ذہنوں کو بیدار کر رہے ہیں، پاکستان جولاکھوں جانیں قربان کرکے بناتھا، اب نئے پاکستان کا نعرہ لگاکر ہمارے آباؤاجدادکی 20لاکھ قربانیوں کاسوداکرنے کی گھناؤنی سازش کی جارہی ہے۔ رکن رابطہ کمیٹی وسیم آفتاب نے کہاکہ عمران خان نے پاکستان کو تقسیم کے دوراہے پر لاکر کھڑا کردیا ہے جہاں پاکستان میں غریبوں کی جماعت ایک طرف اور امیروں کی جماعت پی ٹی آئی ایک طرف کھڑی ہوچکی ہے اور کراچی دشمنی میں پی ٹی آئی کے ساتھ جماعت اسلامی اور اس کا تھنڈر اسکواڈ شامل ہے ۔عمران خان نے حالیہ انتخابات میں اربوں روپے الیکشن مہم اور اپنی خود نمائی پر خرچ کرڈالے ہیں جس کاواحد مقصد یہ تھا کہ وہ وزیراعظم پاکستان بنناچاہتے تھے لیکن پاکستان کی غیور عوام نے عمران خان جس کی زندگی عیاشیوں میں گزری ایسے مسترد کردیا ہے اور مسترد کئے جانے کے نتیجے میں عمران خان شدیدبوکھلاہٹ کا شکارہے۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان کا مقصد وزیر اعظم پاکستان بنناتھا اور اسے یہ گوارا نہیں کہ وہ رکن قومی اسمبلی بنے ایسے شخص کو اپنی ذات کے علاوہ کسی چیز سے پیارہے تووہ عیاشی اور اخلاق سے گری ہوئی حرکتیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عصبیت کی بنیاد پر عمران خان نے کراچی کی کرکٹ کو تباہ کیا اورباصلاحیت کرکٹر کا داخلہ عمران خان نے بند کرایا اور اگرکراچی سے کوئی شخص کرکٹ میں نہیں جاپا رہا ہے تواس کی بنیاد بھی عمران خان نے ہی رکھی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان کے ساتھ پورا پنجاب اس لئے نیں نکلاکیوں کہ لوگ جانتے ہیں کہ عمران خان کی اصلیت کیا ہے جب عمران خان 25 سال کی عمر میں پیرس کے کلبوں میں ناچتا تھا اس وقت میرے قائد قوم کو شعور دے ر ہے تھے،اوراس وقت بھی جناب الطاف حسین نے اس شہر قائد کے پڑھے لکھے نوجوانوں کوایوانوں میں بھیجا تھا ، جب تم اپنے کرکٹ کے کلب میں ہیروئن اسمگلنگ کررہے تھے اورعوام کا مستقبل تباہ کررہے تھے ،عمران خان نے نئے پاکستان کے نام پرعوام کو بیوقوف بنایا ہے اور لوگوں کو بے راہ روی کی جانب مائل کیا ہے ۔ پاکستان میں اخلاق سے گری ہوئی اگرکوئی جماعت ہے اور گرے ہوئے کرپشن کرنے کے بعد لوگوں کو قبول کیاجارہا ہے وہ سیاسی جماعت پی ٹی آئی ہے ۔ انوسٹی گیشن ایجنسیاں اس بات کی تحقیق کریں کہ عمران خان اور جماعت اسلامی کا تھنڈر اسکواڈ ملک بھر میں متحرک ہوچکا ہے ، جماعت اسلامی وہی جماعت ہے جس نے الشمس اور البدر بنا کر ملک کے دو ٹکڑے کئے تھے لہٰذا اس تھنڈر اسکواڈ ، الشمس اور البدر اور تحریک انصاف کے غنڈہ عناصر کو ہم بتانا چاہتے ہیں کہ اگرتم اپنی حرکتوں سے بازنہیں آئے اور جناب الطاف حسین کے خلاف بدگمانی پیدا کرنے کی کوشش کی تو ہمارے صبر کی بھی ایک حد ہے۔انہوں نے کہاکہ ہم اپنے خون سے اپنی تاریخ لکھتے آئے ہیں اوراب اپنے خون سے قوم کی تاریخ لکھیں گے،عمران خان تواتناکم ظرف ہے کہ اپنی بیٹی کوبھی اپنانہیں مانتا توپی ٹی آئی والوں کواپناکیابنائیں گا۔مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے رابطہ کمیٹی کے رکن ڈاکٹر صغیر احمد نے کہا کہ عمران خان نے آج پاکستان کی حق پرست عوام کو للکارا ہے اور قائد تحریک الطاف حسین پر من گھڑت الزام لگا کر کروڑوں عوام کے دلوں کو ٹھیس پہنچائی اور ان کے جذبات کو مجروح کیا ہے اور اس کے خلاف ملک بھر میں ریلیاں نکالی جارہی ہیں اور بے بنیاد شرمناک الزام کے خلاف اپنا احتجاج ریکارڈ کرایاجارہا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان کے شرمناک اور گھناؤنے کرتوت سے دنیا واقف ہے ، ان کی راتیں کہا ں گزرتی تھی اور جوانی کس طرح بسر ہوئی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ الیکشن کمیشن نے بہت چرچاکیا کہ جو آئین کے آرٹیکل 62، 63کی شق پر پورا نہیں اترتا الیکشن نہیں لڑے گا جبکہ عمران خان نے اپنی بیٹی کو بن باپ کے چھوڑدیا ہے لہٰذا عمران خان جیسے شخص کو لوگوں کی نمائندگی اور اسمبلی میں بیٹھنے کا حق حاصل نہیں ہے۔احتجاجی مظاہرے کے شرکاء سے رابطہ کمیٹی کے رکن گلفراز خان خٹک نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان نے جناب الطاف حسین پر جوبھونڈا ا الزام عائد کیا ہے اور انہیں بدنام کرنے کی جس طرح سے ناپاک سازش کی ہے اس کے خلاف ملک بھر کے ہر صوبے میں حق پرست عوام نکلے ہوئے ہیں ۔مظاہرہ شام ڈھلے تک جاری رہاہے جس کے بعدتمام شرکاء پرامن طورپرمنتشرہوگئے۔

12/9/2016 1:16:11 PM