Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

طالبان دہشت گردوں، القاعدہ اور داعش کی حمایت کرنے والوں اور انہیں اپنا بھائی اور بچہ کہنے والوں کا سوشل بائیکاٹ کیا جائے


طالبان دہشت گردوں، القاعدہ اور داعش کی حمایت کرنے والوں اور انہیں اپنا بھائی اور بچہ کہنے والوں کا سوشل بائیکاٹ کیا جائے
 Posted on: 12/30/2014
طالبان دہشت گردوں، القاعدہ اور داعش کی حمایت کرنے والوں اور انہیں اپنا بھائی اور بچہ کہنے والوں کا سوشل بائیکاٹ کیا جائے
طالبان کو اپنا بھائی قرار دے گا اور طالبان سے مذاکرات کیلئے لوگوں کو ورغلائے گا وہ پاکستانیوں میں سے نہیں بلکہ دشمنوں میں سے ہوگا
لال مسجد اور جامعہ حفصہ کو گندے لوگوں سے پاک کیا جائے، وہاں ایسی مسجد تعمیر کی جائے جہاں امن، پیار، محبت کا درس دیا جائے 
اخبارات اور ٹی وی کے عملے خصوصاً خواتین صحافیوں کو تحفظ فراہم کیا جائے
سندھ، پنجاب، بلوچستان اور خیبرپختونخوا میں لڑکیوں کے اسکولوں کو جلانے والوں کو سرعام پھانسی پر لٹکایا جائے
خطابات میں کسی دوسرے فقہ اور مسلک پر تنقید نہیں ہوگی اور کسی کی دل آزاری نہیں ہوگی
علمائے کرام کے اجتماع میں ایم کیوایم کے قائد الطاف حسین کی پیش کردہ قراردادیں، تمام علمائے کرام نے ہاتھ اٹھا کر بھرپور تائید کی
لندن۔۔۔ 30 دسمبر2014ء
متحدہ قومی موومنٹ کے قائدجناب الطاف حسین نے آج لال قلعہ گراؤنڈعزیزآبادمیں علمائے کرام کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے چندقراردادیں پیش کیں جن کی تمام علمائے کرام نے ہاتھ اٹھا کر بھرپور تائید کی۔ انہوں نے جوقراردادیں پیش کیں وہ یہ تھیں۔
جولوگ معصوم شہریوں اورفوجیوں کے گلے کاٹنے والے ، ان کے سروں سے فٹبال کھیلنے والے، طالبان دہشت گردوں کو شہید اور شہید فوجیوں کوہلاک کہنے والوں،مساجد، امام بارگاہوں، بازاروں اورفوجی تنصیبات پر خودکش حملے کرنے والے طالبان دہشت گردوں اورالقاعدہ اورداعش کی حمایت کرنے والوں اور انہیں اپنا بھائی اور بچہ کہنے والوں کا سوشل بائیکاٹ کیا جائے۔
پاک فوج، نیوی ، فضائیہ، پیراملٹری فورسز، رینجرز ، پولیس اوردیگرمحکمہ جات جوطالبان، القاعدہ اورداعش کے خلاف اپنی جانوں کوہتھیلی پر رکھ کرجنگ کررہے ہیں اوراس جنگ میں جام شہادت نوش کررہے ہیں آج کااجلاس پاکستان کی مسلح افواج اورپیراملٹری فورسزسے مکمل یکجہتی کا اظہار کرتا ہے۔
آج کااجتماع پورے اسلام کے تمام فقہوں اورمسلکوں کااجتماع ہے جوجنرل راحیل شریف کویقین دلاتاہے کہ پورے پاکستان میں طالبان کواپنابھائی قرار دے گااورطالبان سے مذاکرات کے لئے لوگوں کوورغلائے گا وہ پاکستانیوں میں سے نہیں بلکہ دشمنوں میں سے ہوگا۔
لال مسجد اورجامعہ حفصہ کوگندے لوگوں سے پاک کیاجائے اوروہاں ایسی مسجد تعمیر کی جائے جہاں اسلام کی تعلیمات کے خلاف نہیں بلکہ امن، پیار،محبت کا درس دیاجائے۔
طالبان، القاعدہ اورداعش کے لوگ الیکٹرانک اورپرنٹ میڈیاکے لوگوں سے بحث ومباحثہ ضرورکریں لیکن انہیں دھمکیاں دینے کاعمل بندکریں۔تمام اخبارات اورٹی وی کے عملے خصوصاًخواتین صحافیوں کوتحفظ فراہم کیاجائے، سندھ، پنجاب، بلوچستان اورخیبرپختونخوا میں لڑکیوں کے اسکولوں کوجلانے والوں کوسرعام پھانسی پرلٹکایاجائے۔
تمام مکاتب فکرکے علمائے کرام سے کہاکہ وہ اس بات کویقینی بنائیں کہ آج کے بعد ان کے خطابات میں کسی دوسرے فقہ اورمسلک پر تنقیدنہیں ہوگی اورکسی کی دل آزاری نہیں ہوگی۔
جناب الطا ف حسین نے ان تمام قراردادوں کی تمام علمائے کرام اورمشائخ نے ہاتھ اٹھاکربھرپورتائیدکی۔

12/9/2016 5:13:34 PM