Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

مہاجر دشمنی کے خلاف کراچی کی ہر گلی محلے میں دھرنا ہوگا، الطاف حسین


مہاجر دشمنی کے خلاف کراچی کی ہر گلی محلے میں دھرنا ہوگا، الطاف حسین
 Posted on: 9/25/2014
مہاجر دشمنی کے خلاف کراچی کی ہر گلی محلے میں دھرنا ہوگا، الطاف حسین
دھرنے کے شرکاء ایمبولینس اور مریضوں کو لے جانے والی گاڑیوں کا راستہ نہ روکیں
کراچی امن و امان کیس میں سپریم کو رٹ کے فیصلے کے مطابق تمام سیاسی ومذہبی جماعتوں کے عسکری ونگ ہیں
رینجرز صرف ایم کیوایم کے دفاتر پر غیر قانونی چھاپے مار کر بے گناہ کارکنوں کو گرفتار کر رہی ہے
تمام جماعتوں کے عسکری ونگ ہیں تو پیپلز پارٹی ،اے این پی ، جماعت اسلامی ، سنی تحریک ، اور مسلم لیگ کے کارکنوں کی گرفتاری کیلئے گھر گھر چھاپے کیوں نہیں مارے جاتے ؟
سپریم کورٹ کے ججز بشمول سابق چیف جسٹس سب منافق ، کاذب اور شیاطین ہیں
بعض اینکر پرسنز منافقین کی ترجمانی کر کے قوم کو گمراہ کرتے رہے کہ ایم کیوایم نے عدالت پرقبضہ کرلیا
جب کراچی کے متاثرہ عوام گواہی دینے عدالت پہنچے تومنافق جج عدالت چھوڑکر بھاگ گئے
حق پر ست قلمکار، تجزیہ نگاروں خصوصاً مہاجر دانشور مصلحت کا لبادہ اتار دیں اور آنے والی نسلوں کے بہتر مستقبل کیلئے میدان عمل میں آجائیں
سندھی وڈیروں اور جاگیر دار وں کو اگر دادا گیر ی کاشوق ہے تو اپنے گوٹھ جاکر ہاری کسانوں پر دادا گیری کریں
وزیراعلیٰ سندھ ہاؤس کے باہر احتجاجی دھرنے کے شرکاء سے ٹیلی فون پر خطاب
لندن ۔۔25ستمبر 2014ء 
ایم کیوایم کے قائد جناب الطاف حسین نے کہاہے کہ رابطہ کمیٹی نے آج سے مہاجر دشمنی اور رینجرز کی ظالمانہ کارروائیوں کے خلاف کراچی کی ہر گلی محلے میں دھر نوں کافیصلہ کیا ہے، دھرنے کے شرکا ء احتجاجی دھرنوں کے دوران ایمبولینس او رمریضوں کولے جانے والی گاڑیوں کا راستہ نہ روکیں ۔انہوں نے کہا کہ کراچی امن وامان کیس میں سپریم کو رٹ کے فیصلے کے مطابق تمام سیاسی ومذہبی جماعتوں کے عسکری ونگ ہیں لیکن رینجرزاور پولیس صرف ایم کیوایم کے دفاتر اور کارکنوں کے گھروں پر غیر قانونی چھاپے مار کر بے گناہ کارکنوں کو گرفتار کر رہی ہے ۔
یہ بات انہوں جمعرات کی صبح وزیر اعلیٰ ہاوس سندھ کے باہر احتجاجی دھرنے ک یشرکاء سے ٹیلی فون پر خطاب کر تے ہوئے کہی۔ دھرنے میں رابطہ کمیٹی کے ارکان ، حق پرست عوامی نمائندے ،ایم کیوایم کے ذمہ داران اور کارکنان کے علاوہ رینجرز کی جانب سے ایم کیوایم کے دفترپرچھاپے کے دوران گرفتار کئے گئے کارکنوں کے خانہ خانہ بھی شریک تھے ۔دھر نے کے شرکاء سے خطاب کر تے ہوئے جناب الطاف حسین نے کہا کہ جھوٹوں ، منافقوں اور شیاطین پر اللہ کی لعنت ہے ۔انہوں نے انکشاف کیا کہ سپریم کورٹ آف پاکستان کے ججز بشمول سابق چیف جسٹس سب کاذب،منافق اور شیاطین ہیں اور افتخار محمد چوہدری سب بڑا شیطا ن ہے ،سپریم کورٹ نے کراچی میں امن امان کی خراب صورتحال کے اسباب جاننے کیلئے کراچی میں عدالتی کمیشن بنایا اور سپریم کورٹ کی کراچی بینچ نے شہر میں بھتے کی پرچیاں دینے ، اغوا برائے تاوان کی وارداتیں او رٹارگٹ کلنگ کے ذمہ دار عناصر کے تعین کیلئے عدالت لگائی ،لیکن جب کراچی کے متاثرہ عوام گواہی دینے عدالت پہنچے تومنافق جج عدالت چھوڑکر بھاگ گئے۔اس وقت ٹی وی چینل کے بعض رپورٹر ز اور اینکر پرسنز جوان منافق ججوں کی اولاد تھے منافقین کی ترجمانی کر کے قوم کو گمراہ کرتے رہے کہ ایم کیوایم نے عدالت پرقبضہ کرلیا ۔
جناب الطاف حسین نے کلمہ پڑھتے ہوئے کہا کہ ایم کیوایم نے عدالت پر قبضہ نہیں کیاتھا بلکہ جب سپریم کورٹ نے کراچی امن و امان کیس کے سلسلے میں شہادتیں طلب کیں تو 12مئی کے سانحہ کے عینی شاہدین جس میں پیپلز پارٹی ، اے این پی ، سنی تحریک سمیت تمام جماعتوں کے لوگ شامل تھے ۔اس موقع پر ایم کیوایم کے لوگ اتنی بڑی تعداد میں عدالت پہنچے تو میڈیا کے نمائندوں نے سب سے بڑے شیطان کے کہنے پر یہ خبر چلائی کہ ایم کیوایم نے عدالتی کارروائی نہیں ہونے دی اور ججوں کو پچھلے دروازے سے بھاگنا پڑا ۔
جناب الطاف حسین کہا کہ کراچی امن وامان کیس کی سماعت دوبارہ شروع ہوئی او رسپریم کورٹ نے یہ فیصلہ دیا کہ جماعت اسلامی ، پیپلز پارٹی ، اے این پی ، ایم کیوایم ،مسلم لیگ ، سنی تحریک ، سپاہ صحابہ ، ،سپاہ محمد،لشکرجھنگوی سمیت ہر جماعت کے عسکری ونگز ہیں لیکن ٹی وی چینل کے رپورٹر ز ،اینکر پرسنز، اور تجزیہ نگار ایم کیوایم کے سوا کسی سیاسی ،مذہبی جماعت کا نام نہیں لیتے اور جب بھی عسکری ونگ کی بات آتی ہے تو صرف ایم کیوایم کا نام لیا جاتا ہے۔ جناب الطاف حسین نے کہا کہ شہر میں قیام امن کیلئے جب کراچی آپر یشن کا فیصلہ کیا گیا تو ایم کیوایم نے تحفظات کے باوجود اس آپریشن کی حمایت کی او رواضح الفاظ میں کہا کہ اگر قانون شکن عناصر ایم کیوایم میں موجود ہیں تو انہیں گرفتار کرکے عدالت میں پیش کیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ جھوٹے الزامات کے تحت صرف ایم کیوایم کے دفاتر اور کارکنوں کے گھروں پر پانچ ہزار سے زائد چھاپے مارے جاچکے ہیں ، کیا کسی اور سیاسی و مذہبی جماعت کے دفاتر پر رینجرز نے چھاپے مارے ؟اگر عسکری ونگ تمام سیاسی ومذہبی جماعتوں کے عسکری ونگ ہیں تو پیپلز پارٹی ،اے این پی ، جماعت اسلامی ، سنی تحریک ، اور مسلم لیگ کے کارکنوں کی گرفتاری کیلئے گھر گھر چھاپے کیوں نہیں مارے جاتے ؟جناب الطاف حسین نے چیف آف آرمی اسٹاف جنر ل راحیل شریف کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آج کراچی میں ایم کیوایم کے سیکٹر آفس پر جس طر ح چھاپہ مارا گیا ہے اس سے مہاجروں کے ضبط کا بندھن ٹو ٹ چکا ہے اور اسلام آباد میں احتجاجی دھرنے ہوسکتے ہیں تو مہاجروں سے تعصب او رنفرت کے خلاف کراچی بھر میں گلی گلی احتجاجی دھرنے ہوں گے ،آج مہاجر دشمنی کے خلاف ہر گلی محلہ میں دھرنا ہوگا ۔رابطہ کمیٹی نے دھرنوں کا فیصلہ کر کے یہ بھی واضح کر دیا ہے کہ اگر قائد تحریک اس فیصلے کی توثیق نہ بھی کر یں تب بھی احتجاجی دھرنے دیئے جائیں گے ۔جناب الطاف حسین نے کہا میڈیا کے نمائندے کیوں سچ نہیں بولتے کہ اگر سپریم کورٹ ک فیصلے کے مطابق تما م سیاسی ومذہبی جماعتوں کے عسکری ونگ ہیں تو رینجر ز اورپولیس صرف ایم کیوایم کے عسکری ونگ کیوں تلاش کر رہی ہے ؟ انہوں نے کہا کہ اب یہ دھاندلی نہیں چلے گی ،مہاجرکسی سے نفرت نہیں کرتے ، پاکستان کی تمام حق پرست قومیتیں ایم کیوایم کے پرچم تلے جمع ہیں اور حق پرستی کی جدوجہد میں ایم کیوایم کے شانہ بشانہ ہیں ۔ایم کیوایم کے احتجاجی دھرنوں میں ،پختون ،بلوچ ، سندھی ،کشمیر ، سرائیکی ، گلگتی ،بلتستانی ،اور غیر مسلم پاکستانی بھی شریک ہیں، ایم کیوایم کے پلیٹ فارم پر تمام حق پرست بلا امتیاز رنگ و نسل اور زبان ایک خاندان بن چکے ہیں اور ملک کے مظلوم او رمحروم عوام کا خاندان صرف ایم کیوایم ہے ۔جناب الطا ف حسین نے رینجرز کے اعلیٰ حقام کومخاطب کر تے ہوئے کہا کہ وہ اپنی کمر یں کس لیں اور ایم کیوایم کے دفاترپر جتنے چھاپے مار یں ،ہم تمھارے جھوٹ کے آگے ہر گز سرینڈر نہیں کریں گے ، ہم یزیدی نہیں بلکہ حسینی لشکر کے لوگ ہیں ۔
جناب الطا ف حسین نے حق پر ست قلمکاروں ،دانشوروں ، تجزیہ نگاروں خصوصاً مہاجر دانشور وں سے پرزور دیا کہ وہ مصلحت کا لبادہ اتار دیں او رآنے والی نسلوں کے بہتر مستقبل کیلئے میدان عمل میں آکر کردار ادا کریں ۔ انہوں نے کہا کہ سندھی وڈیروں اور جاگیر دار وں کو اگر دادا گیر ی کاشوق ہے تو اپنے گاؤں گوٹھ جاکر غریب ہاری کسانوں پر دادا گیری کریں اگرانہوں نے کراچی کے باشعور عوام پر داداگیری دکھانے کی کوشش کی تو عوام اپنی حفاظت کرنا خوب جانتے ہیں ۔ انہوں نے ایم کیوایم کے کارکنوں بالخصوص ماؤں ،بہنوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آپ نے ماضی میں ہمت وجرات او ربہادر ی کا مظاہر ہ کیا ہے اس کڑے او رآزمائش کے وقت میں بھی آپ ہمت وحوصلے سے کام لیں اور ہرگزمایوس نہ ہوں ۔انہوں نے گرفتار شدگان کے اہل خانہ کو تسلی دیتے ہوئے کہا کہ وہ بھی ہمت سے کام لیں ۔ 

12/5/2016 12:31:40 PM