Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

میں پاگل ہوں۔۔۔ (تحریر محمد انور)

 Posted on: 6/7/2013 1   Views:853
میں پاگل ہوں (محمد انور) میں پاگل ہوں اس لئے سوچتا کچھ زیادہ ہی ہوں۔ جب سے سندھ کابینہ بنی ہے اس وقت سے میں دنیا کاوہ نقشہ مسلسل دیکھ رہاہوں جسے عرف عام میں ورلڈگلوب بھی کہاجاتاہے اور جس کا عکس گولے کی شکل میں ڈیکوریشن پیس کے طور پر بھی کچھ گھروں میں سجاوٹ کے لئے رکھا جاتا ہے اور ہاتھوں سے گھمایا جاتا ہے تاکہ اسے گھما گھما کر ایک ہی جگہ بیٹھ کرپوری دنیا کو دیکھا جاسکے ۔میں دنیا کے اس نقشہ پرموجود چھوٹے بڑے ان ممالک پر جہاں جمہوریت ہے وہاں لال مارکرسے گول دائرے بناتا رہا تاکہ جب میں جمہوری ممالک کی گنتی کروں تو گنتی کرنے میں آسانی ہو۔ تمام جمہوری ممالک کو گننے کے بعد میں اس نتیجہ پر پہنچا کہ تمام ممالک کہیں تو صوبوں کی شکل میں تقسیم ہیں۔۔۔اورکہیں ریاستوں یا چھوٹے بڑے شہروں کی شکل میں موجود ہیں ۔خواہ کوئی اسٹیٹ(state) ہو ۔۔۔ یا بڑا شہر ہو ۔۔۔ یا صوبہ ہو،میں نے یہ جاننے کی کوشش کی کہ کہیں مجھے کوئی ایسا صوبہ یا ریاست مل جائے کہ جس کے سب سے بڑے یا دوسرے بڑے شہر۔۔۔صوبہ کے دارالخلافہ۔۔۔ یا نائب دارالخلافہ۔۔۔ یااس صوبہ کے سب سے بڑی آبادی والے شہر۔۔۔ اور اسی صوبہ کے دوسری بڑی آبادی والے شہر کی نمائندگی اس صوبہ یا ریاست کی حکومت میں نہ ہو۔۔۔مجھے صرف ایک ملک پاکستان نظر آیا جسکے جنوبی صوبہ سندھ میں ،جس کا دارالخلافہ کراچی ہے۔۔۔وہ کراچی جسے پوری دنیا میں پاکستان کے معاشی حب اور بندرگاہ کے نام سے پہچانا جاتاہے ۔۔۔جو صرف صوبہ سندھ کا ہی سب سے بڑا شہر نہیں بلکہ پورے پاکستان کا سب سے بڑا شہر ہے۔۔۔ اس کی کوئی نمائندگی صوبہ سندھ کی کیبنٹ میں نہیں اور نہ ہی اس صوبہ کے دوسرے بڑے شہر کی اس کیبنٹ میں کوئی نمائندگی ہے۔حتیٰ کہ تیسرے بڑے شہرکی بھی کوئی نمائندگی نہیں ہے ۔آخر ایسا کیوں ہے؟ کیاخودمرکزی شہروں کوہی نمائندگی کے حق سے محروم رکھنے کاعمل درست قراردیاجائے گا؟۔۔۔کیااس عمل کوصحیح جمہوریت سے تعبیرکیاجائے گا؟۔۔۔یااسے دھوکہ بازی اور بے ایمانی کی بنیادپر تشکیل کردہ حلقہ بندیوں کاشاخسانہ قراردیاجائے گا؟۔۔۔کیاایسی صوبائی حکومت کواس پورے صوبے کی نمائندہ حکومت یاپورے صوبے کی ترجمان حکومت قراردیاجاسکتاہے جس میں صوبے کادارالخلافہ ہی نمائندگی سے محروم اورمکمل طورپر فارغ ہو؟۔۔۔ کیا اس عمل سے ملک مضبوط ہوگا؟۔۔۔کیاایسا عمل لوگوں کوقریب لانے میں معاون ومددگارہوگا یا انہیں مزیددورکرنے کاسبب بنے گا ؟۔۔۔کیا ایسا کرنے والے درست کررہے ہیں؟۔۔۔آخریہ سب کچھ میں کیو ں سوچتا ہوں؟۔۔۔بہت سوچ بچار کے بعد بالآخر میں اس نتیجہ پر پہنچا کہ شاید میں واقعتاً پاگل ہی ہوں۔