Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

عمران فاروق قتل کیس پر انسداددہشت گردی اسلام آباد کی عدالت کے اس فیصلے کو ہرگز تسلیم نہیں کرتے جس میں قائد تحریک الطاف حسین کو بغیرثبوت وشواہد کے ملوث کیاگیا ہے ، رابطہ کمیٹی ایم کیوایم


عمران فاروق قتل کیس پر انسداددہشت گردی اسلام آباد کی عدالت کے اس فیصلے کو  ہرگز تسلیم نہیں کرتے جس میں قائد تحریک الطاف حسین کو بغیرثبوت وشواہد کے  ملوث کیاگیا ہے ، رابطہ کمیٹی ایم کیوایم
 Posted on: 6/18/2020
عمران فاروق قتل کیس پر انسداددہشت گردی اسلام آباد کی عدالت کے اس فیصلے کو 
ہرگز تسلیم نہیں کرتے جس میں قائد تحریک الطاف حسین کو بغیرثبوت وشواہد کے
 ملوث کیاگیا ہے ، رابطہ کمیٹی ایم کیوایم
ضمیر قانونی ماہرین بھی اس فیصلے کو Travesty of justice  قراردے رہے ہیں
انسداددہشت گردی کی عدالت کے فیصلے پر ایم کیوایم رابطہ کمیٹی کاردعمل 

متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے ڈاکٹرعمران فاروق قتل کیس پراسلام آباد کی انسداد دہشت گردی عدالت کے اس فیصلے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے جس میں بغیرتحقیق اورثبوت وشواہد یہ کہاگیاہے کہ ڈاکٹرعمران فاروق کے قتل کا حکم بانی متحدہ الطاف حسین نے دیاتھا۔ ایک بیان میں رابطہ کمیٹی نے کہاکہ ایم کیوایم ، انسداددہشت گردی کی عدالت کے اس فیصلے کو ہرگز تسلیم نہیں کرتی اور اس فیصلے کوقانون کی آڑ میں کھلی دہشت گردی قراردیتی ہے۔رابطہ کمیٹی نے کہاکہ یہ فیصلہ ایک طے شدہ سازش کے تحت سیاسی بنیادوں پردیا گیا ہے جس کامقصدیہ ہے کہ قائدتحریک جناب الطاف حسین کی کردارکشی کی جائے اوردنیا بھرمیں ان کاامیج خراب کیاجائے۔رابطہ کمیٹی نے کہاکہ ایم کیوایم قانون پسند اورجمہوری جماعت ہے ، ایم کیوایم ،قائد تحریک جناب الطاف حسین کے خلاف منفی پروپیگنڈوں اورجھوٹے الزامات کی نہ صرف بھرپورمذمت کرتی ہے بلکہ اسے ایک سیاسی مقاصد کے تحت دیا گیا غیرمنصفانہ فیصلہ قراردیتی ہے ۔ رابطہ کمیٹی نے کہاکہ باضمیر قانونی ماہرین بھی اس فیصلے کو Travesty of justice  قراردے رہے ہیں۔
٭٭٭٭٭


7/12/2020 2:02:55 AM