Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

ہم دہشت گرد نہیں امن پسند ہیں اور پورے ملک میں امن چاہتے ہیں۔ الطاف حسین


ہم دہشت گرد نہیں امن پسند ہیں اور پورے ملک میں امن چاہتے ہیں۔ الطاف حسین
 Posted on: 10/27/2015
ہم دہشت گرد نہیں امن پسند ہیں اور پورے ملک میں امن چاہتے ہیں۔ الطاف حسین
کرپشن فری سوسائٹی اور انصاف کا نظام چاہتے ہیں۔ الطاف حسین
جو لوگ ایم کیوایم کو دہشت گرد سمجھتے ہیں اللہ تعالیٰ انہیں توفیق دے کہ وہ ایم کیوایم کو ملک کا دشمن سمجھنے کے بجائے اپنا سمجھیں
قومی ادارے اور ایم کیوایم ملکر کڑی سے کڑی آزمائشوں کا سامنا کریں اور مل جل کر ملک کی خدمت کریں
جاگیرداروں اور وڈیروں نے بھٹو خاندان کی شہادت کا بدلہ اقتدار حاصل کرکے اور وولت کما کر لیا ہے
جاگیرداروں اور وڈیروں نے غریب سندھیوں کی کوئی مددکرنے کے بجائے انہیں اپنا غلام بنائے رکھا
میں غریب سندھیوں کو جاگیرداروں اور وڈیروں کے مظالم سے نجات دلانا چاہتا ہوں 
غریب و مظلوم سندھی ہاریوں! کراچی سے کشمور تک بلدیاتی انتخابات میں ایم کیوایم کے نامزد امیدواروں کو ووٹ دیکر کامیاب بنائیں
میرا پیغام غریبوں کے حقوق کیلئے ہے، مخالفین چاہے کچھ بھی کہیں، یہ میرے پیغام کی سچائی ہے کہ وہ آج ملک بھر میں پھیل رہا ہے
حکومت نے میری تقریر نشرکرنے اور تصویر دکھانے پر پابندی لگادی ہے مجھے اسکی کوئی پروا نہیں، الطاف حسین غریبوں کے دل میں بستا ہے
پکا قلعہ حیدرآباد میں ایم کیوایم کے ذمہ داروں اور کارکنوں کے اجلاس سے وڈیو لنک کے ذریعہ خطاب
لندن۔۔۔27، اکتوبر2015ء
متحدہ قومی موومنٹ کے قائد جناب الطاف حسین نے کہا ہے کہ بعض عناصر ایم کیوایم کودہشت گردکہتے ہیں اوراس کاامیج خراب کرنے کی کوشش کرتے ہیں،یہ سب جھوٹ ہے،ہم دہشت گردنہیں امن پسندہیں اورپورے ملک میں امن چاہتے ہیں، کرپشن فری سوسائٹی اورانصاف کا نظام چاہتے ہیں۔ جولوگ ایم کیوایم کو دہشت گردسمجھتے ہیں اللہ تعالیٰ ان لوگوں اوراداروں کوتوفیق دے کہ وہ ایم کیوایم کوملک کادشمن اورغلط سمجھنے کے بجائے اس کواپناسمجھیں، اس سے پیارکرناسیکھیں تاکہ وہ قومی ادارے اورایم کیوایم ایک ہوکرملک کی خدمت کریں اورکڑی سے کڑی آزمائشوں کا سامنا کریں اور مل جل کرملک کی خدمت کریں۔ انہوں نے کہاکہ جاگیرداروں اوروڈیروں نے بھٹو خاندان کی شہادت کابدلہ اقتدار حاصل کرکے اور وولت کما کر لیا ہے لیکن انہوں نے غریب سندھیوں کی ترقی وخوشحالی کے بجائے انہیں اپنا غلام بنارکھا ہے ۔ انہوں نے صوبہ سندھ میں بسنے والی تمام قومیتوں سے پرزوراپیل کی ہے کہ وہ غریب ومظلوم سندھی ہاریوں ، کسانوں ،مزارعین اور محنت کشوں کو ظالم جاگیرداروں اوروڈیروں کے چنگل سے آزاد کرانے کیلئے اتحاد ویکجہتی کا مظاہرہ کریں اور کراچی سے کشمور تک بلدیاتی انتخابات میں ایم کیوایم کے نامزد امیدواروں کو ووٹ دیکر کامیاب بنائیں۔ جناب الطاف حسین نے ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کے روز پکا قلعہ حیدرآبادمیں ایم کیوایم کے ذمہ داروں اور کارکنوں کے اجلاس سے وڈیو لنک کے ذریعہ خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ایم کیوایم کی رابطہ کمیٹی کے ارکان ، حق پرست ارکان قومی وصوبائی اسمبلی ، سندھ تنظیمی کمیٹی کے ارکان اور حیدرآباد زونل کمیٹی کے اراکین بھی موجود تھے ۔ جناب الطاف حسین کا خطاب پاکستان کے علاوہ برطانیہ ، کینیڈا، امریکہ ، آسٹریلیا، جرمنی ، ساؤتھ افریقہ، بیلجیم، سوئیڈن، جاپان ،خلیجی ممالک اور دنیا کے دیگر ممالک میں بھی دیکھا گیا۔ اپنے خطاب میں جناب الطاف حسین نے کہاکہ گزشتہ روز پاکستان کے مختلف علاقوں میں ہولناک زلزلے کے باعث اب تک کی اطلاعات کے مطابق 250 سے زائد افراد جاں بحق اور ایک ہزار سے زائد زخمی ہوچکے ہیں، اللہ تعالیٰ جاں بحق افراد کی مغفرت فرمائے ، انہیں جنت الفردوس میں جگہ دے اورزخمیوں کو صحت کاملہ عطا کرے ۔ انہوں نے کہاکہ حسب روایت قدرتی آفات یا حادثات سے متاثرہ افراد کی امدادکیلئے ایم کیوایم کا فلاحی ادارہ خدمت خلق فاؤنڈیشن بڑھ چڑھ کر کردار ادا کررہی ہے اور زلزلہ سے متاثرہ افراد کی امداد کیلئے خدمت خلق فاؤنڈیشن کی جانب سے ملک بھر میں 100 سے زائد امداد کیمپ قائم کیے جاچکے ہیں ۔ 2005ء کے قیامت خیز زلزلے میں بھی خدمت خلق فاؤنڈیشن نے متاثرین کی تھی اور آج بھی ایم کیوایم کا یہ فلاحی ادارہ دکھی انسانیت کی خدمت میں پیش پیش ہے ۔ جناب الطاف حسین نے کہاکہ گوکہ ایم کیوایم 2013ء میں دہشت گردوں کے خلاف شروع کیے گئے آپریشن کے نام پر ریاستی مظالم کا نشانہ بنی ہوئی ہے ، اس دوران ہزاروں کارکنان شہیدوزخمی کیے جاچکے ہیں اور ہزاروں کو گرفتارکرکے جیلوں میں قید کردیاگیا لیکن اس کے باوجود غوروخوض کرکے ہم اس نتیجے پرپہنچے کہ چاہے کارکنان کی گرفتاریاں کیوں نہ ہوں لیکن اگر ہماری مدد سے کسی ایک انسان کی بھی زندگی بچ جائے تو ایک انسان کی جان بچانے کا مطلب پوری انسانیت کو بچانے کے مترادف ہوگا۔ جناب الطاف حسین نے پاکستان سمیت دنیا بھرمیں مقیم حق پرست عوام بالخصوص مخیرحضرات سے دردمندانہ اپیل کی کہ خدمت خلق فاؤنڈیشن کے امدادی کیمپوں میں امدادی اشیاء جمع کرائیں ، اگر امدادی اشیاء جمع نہ کراسکیں تو قانونی طریقے سے نقد رقوم عطیہ کریں تاکہ خدمت خلق فاؤنڈیشن کے تحت امدادی اشیاء متاثرہ علاقوں تک فراہم کی جاسکے اور زلزلہ سے متاثرہ خاندانوں کی بہتر سے بہتر خدمت کی جاسکے۔جناب الطاف حسین نے مصائب ومشکلات کا سامنا کرنے کے باوجوددکھی انسانیت کی خدمت کے جذبے کے تحت زلزلہ سے متاثرہ افراد کی مدد کیلئے امدادی کیمپ قائم کرنے پر ایک ایک ساتھی کو زبردست خراج تحسین پیش کیا۔ جناب الطاف حسین نے سندھ دھرتی اور سندھ کے غریب ومظلوم عوام کی محرومیوں کا تذکرہ کرتے ہوئے کہاکہ سندھ کے جاگیرداروں ، وڈیروں اورسرمایہ داروں نے غریب ہاری ، کسان اور محنت کشوں کی مدد کرنے کے بجائے ان کے حقوق غصب کیے ، جب ذوالفقار علی بھٹو کو شہید کیاگیا تو سندھ کے جاگیرداروں اوروڈیروں نے ان کی شہادت کا بدلہ اس طرح لیا کہ اقتدار حاصل کرکے عیش وعشرت کی زندگی گزار کر لیا، پھرمیر شاہنواز بھٹو اورمیرمرتضیٰ بھٹو کو شہید کیاگیا تو ان کی شہادت کا بدلہ اقتدار حاصل کرکے لیا گیااور بالآخر بے نظیر بھٹو کو شہید کردیا گیا لیکن ان کی شہادت کا بدلہ بھی اقتدار حاصل کرکے اور دولت کما کر لیا گیا لیکن ان جاگیرداروں اوروڈیروں نے غریب سندھیوں کی کوئی مددکرنے کے بجائے انہیں اپنا غلام بنائے رکھا۔ جناب الطاف حسین نے سندھی زبان میں خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ظالم جاگیرداراوروڈیرے مظلوم عوام کے اتحاد کے خلاف سازشیں کرتے ہیں اور ان کے درمیان غلط فہمیاں پیدا کرتے ہیں ، ہمیں مل جل کر ان جاگیرداروں اوروڈیروں کی سازشوں کو ناکام بنانا ہے ، آپ سندھ دھرتی کے وارث اور شاہ لطیف ؒ کے پیغام کے امین ہو، میں آپ سے درخواست کرتا ہوں کہ غریب ہاریوں، کسانوں، مزارعین ، محنت کشوں اوران کے خاندان کو ظالم جاگیرداروں اوروڈیروں کے چنگل سے نجات دلانے کیلئے میدان عمل میں آئیں ، اتحاد کا مظاہرہ کریں ، سندھ دھرتی میں رہنے والے اردو بولنے والے ہوں یا سندھی بولنے والے ہوں ، پختون ، پنجابی ، بلوچ، کشمیری،سرائیکی ، ہزاروال کسی بھی قومیت سے تعلق رکھتے ہوں میری ان سب سے اپیل ہے کہ وہ آپس میں متحد ہوجائیں ۔انہوں نے مزید کہاکہ مجھے سندھی زبان بولنی نہیں آتی لہٰذا اگر سندھی بولنے میں کوئی غلطی ہوتو میں پیشگی معذرت چاہتا ہوں لیکن سندھی زبان میری دھرتی کی زبان ہے اور میں سندھی زبان سے محبت کرتا ہوں۔ میں غریب سندھیوں کو جاگیرداروں اوروڈیروں کے مظالم سے نجات دلاناچاہتا ہوں ، یہ میری دلی خواہش ہے لیکن اس کام کیلئے مجھے سندھی ماؤں ، بہنوں ، بزرگوں اور نوجوانوں کا تعاون درکار ہے ۔ جناب الطاف حسین نے سندھ کے عوام سے اپیل کی کہ وہ کراچی سے کشمور تک بلدیاتی انتخابات میں ایم کیوایم کے نامزد امیدواروں کو ووٹ دیکر کامیاب بنائیں ،مجھے معلوم ہے کہ حق پرستی کی اس جدوجہد میں آپ کو اپنے علاقے کے جاگیرداروں اوروڈیروں کے مظالم کا سامنا کرنا پڑے گا ، وہ آپ پر مظالم ڈھائیں گے لیکن سندھ دھرتی ماں کی خاطر ایک مرتبہ آپکو ظالم جاگیرداروں اوروڈیروں کے خلاف کھڑا ہونا پڑے گا، یہ کوئی مشکل کام نہیں ہے ، اگر سندھ کے عوام نے بلدیاتی انتخابات میں ہمت کا مظاہرہ کیا اور ایم کیوایم کے نامزد امیدواروں کے انتخابی نشان پر اپنے اعتماد کی مہرلگاکر حق پرستی کا ساتھ دیا تو انشاء اللہ ، ایم کیوایم انہیں مایوس نہیں کرے گی ۔ ہم سب مل کر سندھ دھرتی کا قرض اتاریں گے ، مل جل کر سندھ دھرتی کی خدمت کریں گے ، عوام کی ترقی وخوشحالی کیلئے سڑکیں، اسکول ، گرلز کالج، دیگر تعلیمی ادارے اور اسپتال قائم کریں گے ۔ جناب الطاف حسین نے صوبہ سندھ کے بلوچ، پختون اور پنجابی عوام کو مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ آپ کا بھی جینا مرنا سندھ دھرتی سے وابستہ ہے ، سندھ کی ترقی اور خوشحالی کی خاطر آپ بھی ایم کیوایم کے پرچم تلے متحد ہوجائیں اور سندھ کے غریب عوام کو جاگیرداروں کے چنگل سے نجات دلانے کیلئے بلدیاتی انتخابات میں ایم کیوایم کے نامزد امیدواروں کو ووٹ دیکر کامیاب بنائیں ۔جناب الطاف حسین نے کہاکہ مختلف قومیتوں سے تعلق رکھنے والے جاگیرداروں ، وڈیروں اور سرمایہ داروں نے آپس میں اتحاد قائم کررکھا ہے اور وہ غریب عوام کے خلاف ایک ہیں تو پھر سندھ میں بسنے والی تمام قومیتوں کے غریب ومظلوم عوام کو بھی اتحاد کا مظاہرہ کرنا چاہیے ۔ اگر کراچی سے کشمور تک سندھی ، بلوچ ، پختون، پنجابی ، اردوبولنے والے سندھی، کشمیری ، گلگتی ، بلتستانی ، سرائیکی ، ہزاروال ، آغاخانی ، اسماعیلی، بوہری ، سکھ، ہندواور عیسائی برادری نے اتحاد کامظاہرہ کیا اور ایم کیوایم کے نامز د امیدواروں کوووٹ دیکر کامیاب بنایا تو انشاء اللہ صوبے کے غریب ومظلوم عوام کی قسمت بدل جائے گی ، صوبہ ترقی کرے گا، صوبے کے عوام خوشحال ہوں گے اور پھر غریب سندھیوں پر ظلم کرنے والے جاگیرداروں ، وڈیروں اور ان کے مظالم کا خاتمہ ہوجائے گا۔جناب الطاف حسین نے کہاکہ بعض عناصر ایم کیوایم کودہشت گردکہتے ہیں اوراس کاامیج خراب کرنے کی کوشش کرتے ہیں،یہ سب جھوٹ ہے،ہم دہشت گردنہیں ہیں، امن پسندتھے، امن پسند ہیں اور پورے ملک میں امن چاہتے ہیں، کرپشن فری سوسائٹی اورانصاف کانظام چاہتے ہیں۔جناب الطاف حسین نے کہاکہ جولوگ ایم کیوایم کوملک کاخیرخواہ نہیں سمجھتے بلکہ دہشت گردسمجھتے ہیں اللہ تعالیٰ ان لوگوں اوراداروں کوتوفیق دے کہ وہ ایم کیوایم کوملک کادشمن اورغلط سمجھنے کے بجائے اس کواپناسمجھیں، اس سے پیارکرناسیکھیں تاکہ وہ قومی ادارے اورایم کیوایم ایک ہوکرملک کی خدمت کریں اورکڑی سے کڑی آزمائشوں کا سامنا کریں اورمل جل کرملک کی خدمت کریں۔ جناب الطاف حسین نے کہاکہ میراپیغام غریبوں کے حقوق کیلئے ہے، مخالفین چاہے کچھ بھی کہیں،یہ میرے پیغام کی سچائی ہے کہ وہ آج سندھ کے گاؤں گوٹھوں ہی میں نہیں بلکہ پنجاب کے دیہات، بلوچستان کے پہاڑوں، خیبرپختونخوا ، آزادکشمیر ، گلگت بلتستان کی وادیوں اورپورے ملک کے چپہ چپہ میں پھیل ر ہاہے اسی لئے حکومت نے ڈرکر میری تقریراوربیانات نشرکرنے اورتصویردکھانے تک پرپابندی لگادی ہے لیکن مجھے اس کی کوئی پروا نہیں ، الطاف حسین غریبوں کے دل میں بستاہے۔انہوں نے کہاکہ میں اللہ تعالیٰ کالاکھ لاکھ شکراداکرتاہوں کہ اس نے تمام ترمظالم ،پروپیگنڈوں اورپابندیوں کے باوجود عوام کے دلوں میں میری محبت قائم رکھی، آج بھی عوام میں وہی جذبہ ، وہی عقیدت اوروہی پیارہے۔ جناب الطاف حسین نے حیدرآباد شہر سے اپنی وابستگی اور اس شہر کے عوام کی عقیدت ومحبت کاتذکرہ کرتے ہوئے کہاکہ 38 سالہ جدوجہد کے دوران حیدرآباد کے عوام نے ہرمرتبہ اپنے عمل سے ثابت کیا ہے کہ یہ شہر صرف الطاف حسین کا شہر ہے لیکن اس مرتبہ حیدرآباد کے عوام نے بلدیاتی انتخابات میں اپنے الطاف بھائی سے عقیدت ومحبت کی انوکھی مثال قائم کرکے ایک مرتبہ پھر ثابت کردیا ہے کہ حیدرآباد حقیقتاً الطاف حسین کا شہر ہے ۔ انہوں نے کہاکہ میں حیدرآبادکواپناشہرکہتاہوں توبعض لوگ اس پردبے لفظوں میں اعتراض کرتے ہیں، میں حیدرآبادکواپناشہرکیوں نہ کہوں، اس شہر کے لوگوں نے ہرمشکل وقت میں الطاف حسین کاساتھ نبھایاہے اورتمام تر سازشوں اورپروپیگنڈوں کے باوجودالطاف حسین کے نمائندوں کوبھاری اکثریت سے کامیاب کرایا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ حیدرآباد96یونین کونسلوں میں سے 22یونین کونسلوں میں ایم کیوایم کے چیئرمین اوروائس چیئرمین بلامقابلہ منتخب ہوچکے ہیں ۔اسی طرح 384 جنرل کونسلروں میں سے ایم کیوایم کے 198کونسلرزبلامقابلہ منتخب ہوچکے ہیں پھرمیں حیدرآباد کواپناشہرکیوں نہ کہوں ؟ انہوں نے کہاکہ 1987ء کے بلدیاتی انتخابات میں بھی ایم کیوایم کے میئر اور ڈپٹی میئر بلامقابلہ منتخب ہوئے تھے ،انشاء اللہ اس مرتبہ بھی بلامقابلہ منتخب ہوں گے۔جناب الطاف حسین نے بلامقابلہ کامیاب ہونے والے ایم کیوایم کے تمام یوسی چیئرمین، وائس چیئرمین اورکونسلروں سے کہاکہ وہ عوام کی بلاامتیاز خدمت کریں، میری آرزوہے کہ میرے تمام منتخب نمائندے اس طرح کام کریں کہ عوام اپنے مسائل کے حل کیلئے ان کے پاس نہ آئیں بلکہ وہ خود عوام کی دہلیزپر جاکران کے مسائل حل کریں۔ انہوں نے ایم کیوایم حیدرآباد کی زونل کمیٹی، سیکٹرز، یونٹس اورتمام کارکنوں اورحیدرآبادکے تمام ونگزاورشعبہ جات کے ارکان کوان کی محنت پرزبردست خراج تحسین پیش کیا۔ انہوں نے اجتماع کی کوریج کے لئے آنے والے میڈیاکے تمام نمائندوں کابھی شکریہ اداکیا۔ 








تصاویر

12/7/2016 4:14:28 PM