Altaf Hussain  English News  Urdu News  Sindhi News  Photo Gallery
International Media Inquiries
+44 20 3371 1290
+1 909 273 6068
[email protected]
 
 Events  Blogs  Fikri Nishist  Study Circle  Songs  Videos Gallery
 Manifesto 2013  Philosophy  Poetry  Online Units  Media Corner  RAIDS/ARRESTS
 About MQM  Social Media  Pakistan Maps  Education  Links  Poll
 Web TV  Feedback  KKF  Contact Us        

کراچی میں ڈکیتی کی متعددوارداتوں، بھتہ خوری ،قتل ، لوٹ ماراو رپرتشددواقعات تشویشناک ہیں، رابطہ کمیٹی


کراچی میں ڈکیتی کی متعددوارداتوں، بھتہ خوری ،قتل ، لوٹ ماراو رپرتشددواقعات تشویشناک ہیں، رابطہ کمیٹی
 Posted on: 8/8/2017 1
کراچی میں ڈکیتی کی متعددوارداتوں، بھتہ خوری ،قتل ، لوٹ ماراو رپرتشددواقعات تشویشناک ہیں، رابطہ کمیٹی 
ایک ہی دن جرائم کی متعددوارداتیں رینجرزاورپولیس کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہیں، رابطہ کمیٹی
پرامن جمہوری احتجاج کرنے والی خواتین اورانکے اہل خانہ کو ریاستی مظالم کا نشانہ بنایاجاتاہے ، رابطہ کمیٹی
شہریوں کی جان ومال سے کھیلنے والے جرائم پیشہ عناصرکو کھلی چھوٹ دی جارہی ہے، رابطہ کمیٹی
وزیراعظم پاکستان اوروزیراعلیٰ سندھ ،کراچی میں جرائم کی مسلسل وارداتوں کا نوٹس لیں، رابطہ کمیٹی

متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے شاہراہ قائدین کراچی میں ڈکیتی کی متعددوارداتوں، بھتہ خوری ،قتل ، لوٹ ماراو رپرتشددواقعات پر گہری تشویش کااظہار کیا ہے ۔ ایک بیان میں رابطہ کمیٹی نے کہاکہ آج مسلح ڈاکوؤں نے شاہراہ قائدین پر واقع بنک میں ڈکیتی کے دوران مزاحمت پربنک کے منیجرکو فائرنگ کا نشانہ بناکر قتل کردیا، اورنگی ٹاؤن کے بازارمیں ڈکیتی کی واردات کی گئی، کراچی پریس کلب کے سابق صدر نجیب احمدمرحوم کی رہائش گاہ واقع ماڈل کالونی میں ڈکیتی کے دوران ڈاکوؤں نے نہ صرف لاکھوں روپے مالیت کی قیمتی اشیاء لوٹ لیں بلکہ مزاحمت پر گھرمیں موجود افراد کو بہیمانہ تشددکا بھی نشانہ بنایا جبکہ جرائم پیشہ افراد نے ڈیفنس کے علاقے میں بھتہ نہ دینے پر ایک ڈاکٹر کے گھرپرکریکرسے حملہ کردیا۔رابطہ کمیٹی نے کہاکہ کراچی میں ایک ہی دن چوری ، ڈکیتی ، بھتہ خوری اورقتل کی متعددوارداتیں رینجرز، پولیس اور دیگرقانون نافذکرنے والے اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہیں، قانون نافذکرنے والے ادارے پرامن جمہوری احتجاج کرنے والی خواتین اورانکے اہل خانہ کو ریاستی مظالم کا نشانہ بنارہے ہیں لیکن شہریوں کی جان ومال سے کھیلنے والے جرائم پیشہ عناصرکو کھلی چھوٹ دی جارہی ہے۔ ایسا محسوس ہوتا ہے کہ حکومت اورقانون نافذ کرنے والے اداوں نے مہاجردشمنی میں کراچی کے شہریوں کو ڈاکوؤں اور دیگرجرائم پیشہ عناصرکے رحم وکرم پرچھوڑ دیا ہے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے ۔ رابطہ کمیٹی نے کہاکہ کراچی میں جگہ جگہ پولیس ،رینجرز اوردیگرقانون نافذکرنے والے اداروں کی موجودگی میں جرائم کی وارداتوں کا رونما ہونا اس بات کا کھلا ثبوت ہے کہ قانون نافذکرنے والے ادارے کراچی میں قیام امن کے بجائے لاکھوں کروڑوں عوام کی منتخب نمائندہ جماعت ایم کیوایم کوکچلنے اور مہاجروں کو تقسیم درتقسیم کرنے میں مصروف ہیں۔ رابطہ کمیٹی نے وزیراعظم پاکستان شاہد خاقان عباسی اوروزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ سے مطالبہ کیاکہ کراچی میں جرائم کی مسلسل وارداتوں کاسنجیدگی سے نوٹس لیاجائے ، شہریوں کی جان ومال کاتحفظ یقینی بنایاجائے اورمہاجروں کو ریاستی دہشت گردی کا نشانہ بنانے کے بجائے شہریوں کی جان ومال سے کھیلنے والے جرائم پیشہ عناصر کے خلاف کارروائی کی جائے ۔رابطہ کمیٹی نے بنک ڈکیتی کے دوران مزاحمت پر ڈاکوؤں کی گولی کانشانہ بننے والے بنک منیجرکے سوگوارلواحقین سے دلی تعزیت وہمدردی کا اظہاربھی کیا۔

*****

11/23/2017 1:31:24 AM
سرکلر ...
19 Nov 2017